خاص خبر

(فوٹو: رائٹرس)

بیٹنگ ری ٹریٹ تقریب سے مہاتما گاندھی کی پسندیدہ دھن ’ابائیڈ ود می‘ کو ہٹا یا گیا

بیٹنگ دی ری ٹریٹ تقریب میں بجائی جانے والی دھن ‘ابائیڈ ود می’ مہاتما گاندھی کی پسندیدہ دعاتھی۔ 1950 سےمسلسل تقریب کا حصہ رہی اس دھن کو 2020 میں بھی ہٹا دیا گیا تھا، لیکن شدید احتجاج کے بعد اسے 2021 میں دوبارہ شامل کر لیا گیا۔ اس سال تقریب میں بجائی جانے والی 26 دھنوں کی فہرست میں اس کا ذکر نہیں ہے۔

(فوٹو بہ شکریہ: Wikimedia Commons/KCVelaga)

’امر جوان جیوتی‘ کو نیشنل وار میموریل میں ضم کرنے کے فیصلے پر سابق فوجی آمنے سامنے

سابق فوجیوں کے ایک طبقے کا خیال ہے کہ ‘امر جوان جیوتی’کی پرانی یادگارپہلی اور دوسری عالمی جنگوں میں شہید ہوئےان فوجیوں کے اعزاز میں تھی، جنہوں نے انگریزوں کے لیے جنگ لڑی، جبکہ دوسرے طبقے کا خیال ہے کہ مرکزی حکومت کا یہ فیصلہ 1971کی جنگ میں اپنی جان قربان کرنے والے ہندوستانی فوجیوں کی شہادت کی توہین ہے۔

لکھیم پور کھیری کےتکونیہ علاقے میں3 اکتوبر کو پیش آئےتشدد کے بعد کچھ گاڑیوں میں آگ لگا دی گئی تھی۔ (فوٹو: پی ٹی آئی)

لکھیم پور کھیری تشدد: دوسری چارج شیٹ میں چار کسانوں پر قتل اور دنگے سمیت کئی الزام، تین بری

لکھیم پورکھیری تشدد معاملےمیں درج دوسری ایف آئی آر کے تحت گرفتار کیے گئے سات کسانوں میں سے پولیس نے چار- وچتر سنگھ، گرویندر سنگھ، کمل جیت سنگھ اور گرپریت سنگھ کے خلاف چارج شیٹ داخل کی ہے۔ چار کسانوں پر الزام ہے کہ انہوں نے بی جے پی کے دو مقامی لیڈروں اور وزیر مملکت اجئے مشرا کی گاڑی کے ڈرائیور کو پیٹ پیٹ کر ہلاک کر دیا۔

یتی نرسنہانند۔ (فوٹو بہ شکریہ: ٹوئٹر)

یتی نرسنہانند کے خلاف چلے گا توہین عدالت کا مقدمہ

یتی نرسنہانند نے ایک انٹرویو میں کہا تھا … سپریم کورٹ، اس آئین میں ہمیں کوئی بھروسہ نہیں ہے۔ یہ آئین اس ملک کے سو کروڑ ہندوؤں کو کھا جائے گا… جو لوگ اس نظام، سیاستدانوں، اس پولیس، فوج اور سپریم کورٹ پر بھروسہ کر رہے ہیں، وہ سب کتے کی موت مرنے والے ہیں۔

Don`t copy text!