گراؤنڈ رپورٹ

maxresdefault (15)

سی اے اے مظاہرہ: دہلی پولیس نے آدھی رات کو کہا-جگہ خالی کرو، ورنہ انجام اچھا نہیں ہوگا

ویڈیو: شہریت ترمیم قانون اور این آر سی کے خلاف مشرقی دہلی کے کھریجی میں خواتین گزشتہ کچھ دنوں سے پر امن مظاہرہ کر رہی ہیں۔ ان خواتین نے بتایا کہ منگل کی رات تقریباً 2 بجےدہلی پولیس نے مظاہرین کو وہاں سے ہٹانے کی کوشش کی، ان کے ٹینٹ اکھاڑ دیے اور ان کو دھمکی دی۔ اس کے بعد آس پا س کے مقامی لوگ اور خواتین کی مخالفت کے بعد پولیس وہاں سے چلی گئی۔ ان مظاہرین سے سنتوشی مرکام کی بات چیت۔

JNU-Violence-Student-room-PTI-1024x736

جے این یو تشدد: 5 جنوری کو کیا ہوا تھا؟

ویڈیو: گزشتہ 5 جنوری کی رات کچھ نقاب پوش جے این یو میں گھس آئے اور مختلف ہاسٹل میں توڑ پھوڑ کی اور طلبا کو بے رحمی سے پیٹا۔ اس تشدد میں جے این یو اسٹوڈنٹس یونین صدر آئشی گھوش سمیت کل 30 سے زیادہ لوگ زخمی ہوئے ہیں۔پورے معاملے پر شیکھر تیواری ،دھیرج مشرا، وشال جیسوال اور اویچل دوبے کی رپورٹ۔

اتر پردیش کے رام پور شہر میں شہریت ترمیم قانون کےخلاف ہوئے مظاہرہ کے دوران گولی لگنے سے مارے گئے فیض خان۔

شہریت قانون: ’بیٹا ہاسپٹل میں گھنٹوں پڑا رہا، لیکن کسی نے چیک نہیں کیا کہ وہ زندہ بھی ہے یا نہیں‘

گراؤنڈ رپورٹ : اتر پردیش کے رام پور ضلع میں گزشتہ 21 دسمبر کو شہریت ترمیم قانون کے خلاف مظاہرہ پر تشدد ہو گیا تھا۔ اس دوران فیض خان نام کے ایک نوجوان کی موت ہو گئی تھی۔ رشتہ داروں کا الزام ہے کہ فیض کو وقت پر میڈیکل سہولت نہیں دی گئی اور جب فیملی نے ان کی لاش لینا چاہا تو پولیس نے ان کو پیٹا۔

راشد(فوٹو : منوج سنگھ)

شہریت قانون: ’ہم اب تک سمجھ نہیں پائے کہ ہمیں کس جرم میں گورکھپور پولیس نے گرفتار کیا تھا‘

اتر پردیش کے گورکھپورشہر میں گزشتہ 20 دسمبر کوشہریت قانون اور این آر سی کی مخالفت میں ہوئے مظاہرہ کے دوران پولیس نے سیتاپور کے دو پھیری والے راشد علی اور محمد یاسین کو گرفتار کر لیا تھا۔ 12 دن جیل میں رکھنے کے بعد انہیں ضمانت دی گئی۔

ضمیر خان کی اہلیہ تسلیم جہاں(فوٹو: دی وائر)

شہریت قانون: ’ہمارے پاس کھانے کے پیسے نہیں ہیں، لاکھوں روپے کا جرمانہ کیسے بھریں گے‘

گراؤنڈ رپورٹ: اتر پردیش کے رام پور ضلع میں گزشتہ21 دسمبر کو شہریت قانون کے خلاف ہوئے احتجاج کے بعد پولیس نے کئی لوگوں کو گرفتار کیا ہے۔ اس میں سے کئی لوگوں کے یہاں پبلک پراپرٹی کےنقصان کا ہرجانہ بھرنے کے لیے لاکھوں روپے کا نوٹس بھیجا گیا ہے۔

3012 Bijnor Family Project.00_10_45_22.Still002

کہانی یوپی ایس سی کی تیاری کرنے والے سلیمان کی، جو یوپی پولیس کی گولی سے مارا گیا

ویڈیو: اترپردیش میں کئی جگہوں پر شہریت قانون کی مخالفت میں ہوئے مظاہرے پرتشدد جھڑپ میں تبدیل ہوگئے تھے ۔ 20 دسمبر کو بجنور کے نہٹور قصبے میں پولیس فائرنگ کے دوران دو موت ہوئی تھی ، مرنے والے تھے یو پی ایس کی تیاری کرہے اکیس سالہ سلیمان اور مزدوری کرکے گھر چلانے والے تئیس سالہ انس۔ اہل خانہ سے اویچل دوبے کی بات چیت۔

محمد سلیمان اور محمد انس (دائیں)(فوٹو : دی وائر)

شہریت قانون: ’بیس سال میں بیٹے کو بڑا کیا تھا، پولیس نے مارنے میں 20 منٹ بھی نہیں لگایا‘

گراؤنڈ رپورٹ: گزشتہ 20دسمبر کو اترپردیش کے بجنور ضلع کے نہٹور قصبے میں شہریت قانون کے خلاف ہوئےپر تشدد مظاہرے کے دوران محمد سلیمان اور محمد انس کی موت ہوگئی تھی ۔سلیمان یو پی ایس سی کی تیاری کر رہے تھے ،جبکہ انس اپنے گھر کے اکیلے کمانے والے تھے۔

فوٹو : پی ٹی آئی

شہریت قانون: ضمانت ملنے کے باوجود گورکھپور جیل میں بند ہیں سیتاپور کے دو پھیری والے

گراؤنڈ رپورٹ : گورکھپور میں 20 دسمبر کو شہریت قانون اور این آر سی کے خلاف ہوئے مظاہرے کے بعد پولیس نے کئی لوگوں کو گرفتارکیا تھا۔ ان میں سے کئی کے اہل خانہ کا کہنا ہے کہ گرفتار کئے لوگ مظاہرے میں موجود نہیں تھے، لیکن پولیس نے ان کو حراست میں لیااور بےرحمی سے مارپیٹ کی۔

 مکھرجی نگر (فوٹو دی وائر)

دہلی: مکھرجی نگر میں کوچنگ اور ہاسٹل بند ہو نے کی وجہ کیا ہے؟

گزشتہ دنوں سوشل میڈیا پر وائرل ہوئےایک خط میں کہا گیا تھا کہ دہلی پولیس نے 24 دسمبر سے 2 جنوری تک مکھرجی نگر واقع سبھی کوچنگ سینٹر، ہاسٹل اور پی جی بند کرنے کا حکم دیا ہے۔ دہلی پولیس کے ذریعے اس بات کی تردید کے باوجود پورے علاقے میں سناٹے پسرا ہے اور طلبہ و طالبات اپنے گھر لوٹ چکے ہیں۔اس کے باوجود لوگو ں کا کہنا ہے کہ معاملے کے طول پکڑنے کے بعد اپنی ناک بچانے کے چکر میں پولیس اس خط اور ویڈیو کو فرضی بتا رہی ہے۔

فوٹو: دی وائر

شہریت قانون: بجنور میں حراست میں لیے گئے نابالغ بولے پولیس پیشاب کرانے کے بہانے پیٹتی تھی

گراؤنڈ رپورٹ: اتر پردیش کے بجنور ضلع کے نگینہ قصبے میں شہریت قانون کے خلاف 20 دسمبر کو ہوئے مظاہرہ کے دوران تشدد کے معاملے میں پولیس نے کئی نابالغوں کو بھی حراست میں لے لیا تھا۔ ان کے اہل خانہ کا الزام ہے کہ حراست میں ان کے ساتھ پولیس نے بربریت کی۔

گولی سے زخمی اوم راج سینی کے چچا زاد بھائی سبھاش، ان کی بیوی سدھا دیوی اور ان کے داماد رمیش۔ (فوٹو : دی وائر)

شہریت قانون: بجنور پولیس کا دعویٰ-ماحول کو فرقہ وارانہ ہو نے سے بچایا، لوگوں کا انکار

گراؤنڈ رپورٹ : اترپردیش میں بجنور ضلع کے نہٹور قصبے میں شہریت قانون کو لے کر گزشتہ بیس دسمبر کو تشدد کے دوران دو لوگوں کی موت ہوگی تھی ، جبکہ گولی سے زخمی ایک آدمی کا علاج ہاسپٹل میں چل رہا ہے۔

Muzaffarnagar SHK 2412.00_23_15_04.Still004

مظفر نگر تشدد: ڈر کے ماحول میں جینے کو مجبور مسلمان

ویڈیو: 20 دسمبر کو اترپردیش کے مظفر نگر میں شہریت ترمیم قانون کو لے کر ہو رہا مظاہرہ پر تشدد ہو گیا۔ اس علاقے سے پولیس کے گھر وں میں گھسنے ،توڑ پھوڑ کرنے اور مقامی لوگوں پر پولیس کے تشدد کی خبریں آ رہی ہیں۔اترپردیش میں اب تک 18 لوگوں کے مارے جانے کی خبر ہے۔ ٹیم مظفر نگر کے سروٹ علاقے میں دی وائر کی ٹیم میں پولیس کے تشدد کی شکار ایک فیملی سے بات چیت کی۔

 مشرقی دہلی کے پٹپڑگنج کا محلہ کلینک(تمام فوٹو : سنتوشی مرکام)

دہلی کی عوام کی امیدوں پر کتنے کھرے اترے محلہ کلینک؟

گراؤنڈ رپورٹ: صحت سے متعلق خدمات کی عوام تک رسائی کے مقصدسے 2016 میں دہلی حکومت نے محلہ کلینک کی شروعات کی تھی۔ حکومت کا وعدہ ایک ہزار کلینک کھولنے کاتھا، لیکن فی الحال دہلی کے مختلف علاقوں میں ایسے 210 کلینک کام کر رہے ہیں۔

8R4A7828.MOV.10_18_32_02.Still002

گارمنٹس سیکٹر میں بحران: کیا ہے اس’غیر معمولی‘ صورت حال کی وجہ؟

گراؤنڈ رپورٹ: مختلف شعبے میں اقتصادی بحران کے بیچ بڑے پیمانے پر روزگار کے جانے کا اندیشہ ہے۔ دی وائر نےا پنی اس گراؤنڈ رپورٹ میں گارمنٹس انڈسٹری کے ان ملازمین سے بات کی جنہوں نے الزام لگایا کہ پروڈکشن اور ڈیمانڈ میں کمی کی وجہ سے وہ روزگار سے محروم ہوچکے ہیں ۔اس کے علاوہ ان یونین رہنماؤں سے بھی بات کی گئی جن کا دعویٰ ہے کہ اس سال غیرمعمولی اقتصادی بحران کی وجہ سے لوگوں کو اپنے روزگار سے محروم ہونا پڑا ہے۔

باری سال واقع ایک قدیم ہندو مندر(فوٹو : ابھیشیک رنجن سنگھ)

بنگلہ دیش میں’ویسٹیڈ پراپرٹی ایکٹ‘ کی شکار ہندو اقلیت

گراؤنڈ رپورٹ : 1965 میں اس وقت کی پاکستانی حکومت نے Enemy Property Act بنایا تھا، جس کو اب ویسٹیڈ پراپرٹی ایکٹ کے نام سے جانا جاتا ہے۔ ہندوستان کے ساتھ جنگ میں ہوئی شکست کے بعد عمل میں لائے گئے اس قانون کے تحت 1947 میں مغربی اور مشرقی پاکستان (اب بنگلہ دیش) سے ہندوستان گئے لوگوں کی غیر منقولہ جائیدادوں کو Enemy Property قرار دیا تھا۔

Cricket-Bat_PTI

آرٹیکل 370: کشمیر میں موجود غیر کشمیری مزدور کیا سوچتے ہیں؟

گراؤنڈ رپورٹ : ایک مزدور کا کہنا تھاکہ،اگر دفعہ 370 ہٹانا اور ریاست کی تقسیم کا فیصلہ کشمیریوں کے حق میں ہوتا تو یہاں حالات اس قدر ابتر نہیں ہوتے۔ مواصلاتی خدمات پر پابندی عائد نہیں ہوتی۔ ہر جمعہ کو کرفیو نہیں لگایا جاتا۔ اسکول، دفاتر اور بینک بند نہیں ہوتے۔ سڑکوں پر اتنے فورسز اہلکار تعینات نہیں ہوتے۔

AKI Kashmir Story 1.00_20_19_05.Still002

گراؤنڈ رپورٹ: ’جئے ہند سے جیل‘، کشمیری رہنماؤں کا سفر

ویڈیو: جموں و کشمیر کا خصوصی درجہ ختم کیے جانے کے بعد وہاں تمام رہنماؤں کو حراست میں رکھا گیا ہے ۔ دی وائر کی سینئر ایڈیٹر عارفہ خانم شیروانی نے سرینگر واقع سینٹور ہوٹل میں نظربند سجاد لون ، عمران انصاری ،عمر عبداللہ کے صلاح کار تنویر صادق اور شاہ فیصل سے بات چیت کی ۔

فوٹو : رائٹرس

آرٹیکل 370: حکومت نے کشمیریوں کے زخم پر مرہم کی جگہ نمک رگڑ دیا ہے

سرینگر سے گراؤنڈ رپورٹ : مین اسٹریم میڈیا میں آ رہی کشمیر کی خبروں میں سے 90 فیصد جھوٹی ہیں۔ کشمیر کے حالات معمولی مظاہرہ تک محدود نہیں ہیں اور نہ ہی یہاں کوئی سڑکوں پر ساتھ مل‌کر بریانی کھا رہا ہے۔

dadri

پاکستانی والی گلی: دادری کے اس محلے میں رہنے والے لوگ پریشان کیوں ہیں؟

گراؤنڈ رپورٹ: اتر پردیش میں گوتم بدھ نگر ضلع‎ کے دادری واقع گوتم پوری علاقے کی ایک گلی کا نام پاکستانی والی گلی ہونے وجہ سے یہاں رہ رہے لوگوں کو پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ لوگوں کو کہنا ہے کہ اس نام کی وجہ سے ان کو جلدی کہیں کام نہیں ملتا اور اسکول بچوں کو داخلہ دینے میں بھی بہانے بازی کرتے ہیں۔

سرینگر کے ناتیپورہ میں 15 سال کے ندیم کو ٹیوشن جانے کے دوران آنکھ میں پیلیٹ گن سے چوٹ لگی۔ ان کا کہنا ہے کہ وہ اب دائیں آنکھ سے نہیں دیکھ پا رہے ہیں۔ اپنی ماں کے ساتھ ندیم۔ (فوٹو: سدھارتھ وردراجن/دی وائر)

کشمیر میں امن کے دعووں کے بیچ پیلیٹ سے زخمی ہونے والوں کی بڑھتی تعداد

گراؤنڈرپورٹ: آرٹیکل 370 ہٹائے جانے کے بعد حکومت کے ذریعے وادی میں’امن’کے دعوے کے بیچ گزشتہ کچھ دنوں میں سرینگر کی مہاراجہ ہری سنگھ ہاسپٹل میں پیلیٹ گن سے زخمی ہوئے تقریباً دو درجن مریض بھرتی ہوئے ہیں۔

فوٹو : آنند دت

جھارکھنڈ کی یہ’ نربھیا ‘ریپ  اور تشدد کی وجہ سے 4 مہینے کوما میں رہی، پھر چل بسی

گراؤنڈ رپورٹ : جھارکھنڈ کے لاتیہار ضلع‎ میں گزشتہ جنوری میں دو بچوں کی ماں کے ساتھ گینگ ریپ اور مارپیٹ کی گئی، جس کے بعد وہ کوما میں چلی گئیں۔ تقریباً چار مہینے کوما کی حالت میں ایک ہاسپٹل سے دوسرے ہاسپٹل بھٹکنے کے بعد اس آدیواسی خاتون کی موت ہو گئی۔

سنجئے کالونی (فوٹو : محمد مہروز / دی وائر)

’حکومت ہمیں پانی اور گندگی کے مسائل سے آگے بڑھنے دے تو تعلیم یا دوسری چیزوں کے بارے میں سوچیں‘

گراؤنڈ رپورٹ: لوک سبھا انتخاب میں نیشنل میڈیا کے مدعے بھلےہی ہندومسلمان، پاکستان، راشٹرواد وغیرہ کے اردگرد گھوم رہے ہیں، لیکن قومی راجدھانی میں ساؤتھ دہلی کے سنجئے کالونی کے باشندے روزانہ پانی کی جدو جہد، سیور سسٹم اور بستی میں صاف صفائی جیسی بنیادی سہولیات کے لئے ہی لڑ رہے ہیں۔

وارانسی پارلیامانی حلقہ شہید رمیش یادو کا گاؤں توفہ پور (فوٹو : رضوانہ تبسم)

’جوانوں کے نام پر ووٹ مانگنے سے بدتر کچھ نہیں، مودی شہیدوں کے خون سے کرسی سجانے میں لگے ہیں‘

لوک سبھا انتخاب میں وارانسی سے امیدوار اور وزیر اعظم نریندر مودی اپنی تقریروں میں فوج اور شہیدوں کا لگاتار تذکرہ کر رہے ہیں۔ ان کے پارلیامانی حلقہ کے ہی توفہ پور گاؤں کے سی آر پی ایف جوان رمیش یادو پلواما حملے میں شہید ہوئے تھے۔ انتخاب میں وزیر اعظم اور بی جے پی کے ذریعے فوج اور پلواما حملے کے استعمال پر کیا سوچتے ہیں شہید کے رشتہ دار اور گاؤں کے لوگ۔

tasleem-mother-or-father

گراؤنڈ رپورٹ: غفران کے بھائی کیوں کہہ رہے ہیں، تڑپا تڑپا کر مارنے سے اچھا ہوتا بہار پولیس اس کو تلوار سے کاٹ دیتی؟

غفران کے چچا زاد بھائی نےکہا- تڑپا تڑپا کر مارنے سے اچھا تھا پولیس اس کو تلوار سے کاٹ دیتی۔اس معاملے میں قتل کے ملزم ڈمرا تھانہ انچارج سمیت آٹھ پولیس اہلکاروں کو معطل کر دیاگیا ہے۔ فرار تھانہ انچارج اور پولیس اہلکاروں کی تلاش جاری ہے۔

UrduSchoolKolkata_Umesh

مغربی بنگال : اردو میڈیم اسکولوں میں اساتذہ کی کمی کے لیے کون ذمہ دار ہے؟

مغربی بنگال کی وزیراعلیٰ ممتا بنرجی اکثر یہ کہتی ہں کہ ان کو صوبے کے اقلتوبں کی بہت فکر ہے اور وہ ان کی ترقی کے لئے کافی کچھ کر رہی ہںٹ۔ لکنے اردو مڈویم اسکولوں کی زبوں حالی اور اساتذہ کی قلت ان کے دعوے پر سنگنق سوال کھڑے کر تی ہے۔

(فائل فوٹو : رائٹرس)

یوپی: مہراج گنج میں بند پڑے چینی مل سے متاثر 48000 کسانوں کی خبر لینے والا کوئی نہیں

بی جے پی نے اپنے منشور میں وعدہ کیا تھا کہ فصل بیچنے کے 14 دن کے اندر گنا کسانوں کی ادائیگی یقینی بنائی جائے‌گی اور حکومت بننے کے 120 دنوں کے اندر گنا کسانوں کے بقایے کی ادائیگی کر دی جائے‌گی، لیکن اتر پردیش میں پارٹی کی حکومت بننے کے بعد بھی یہ وعدے کاغذوں سے باہر نہیں نکل سکے ہیں۔

گریٹر نوئیڈا کے علی وردی پور گاؤں کا ایک مکان۔ (فوٹو :روہن کمار/دی وائر)

نوئیڈا کے’شملہ‘بننے کی دوسری تصویر ایک گاؤں کی بربادی کی کہانی بھی ہے

گزشتہ سات فروری کو دہلی-این سی آر میں ہوئی بارش اور ژالہ باری کی تصویروں نے جہاں میڈیا اور عام لوگوں کو رومان میں مبتلا کیا تھا، وہیں اسی موسم کی وجہ سے گریٹر نوئیڈا کے علی وردی پور گاؤں میں تقریبا 150 گھر بری طرح برباد ہو گئے۔ اس بیچ انتظامیہ مدد دینے کے بجائے برباد گھروں کو غیر قانونی قبضہ بتا رہی ہے۔

علامتی تصویر: رائٹرس

ہریانہ: ’خرید کی بہو‘ کے چلن کی ماری ایک متاثرہ کی کہانی

ہریانہ کے فریدآباد کی ایک نابالغ دلت لڑکی کا الزام ہے کہ اغوا کرنے کے بعد ڈیڑھ لاکھ روپے میں اس کاسودا کر کےجبراً شادی کروائی گئی، جس کے بعد لگاتار ریپ کیا گیا۔ پولیس میں معاملہ درج ہونے کے بعد اثر ورسوخ والے ملزم معاملہ واپس لینے کا دباؤ بنا رہے ہیں۔

Don`t copy text!