بنارس ہندو یونیورسٹی

बनारस.00_16_55_08.Still003

’اگر مجھے پتہ ہوتا کہ مجھے 14 دن جیل میں رکھا جائے گا تو میں مظاہرے میں نہیں جاتی‘

ویڈیو: 19 دسمبر کو ایک بچی چمپک کے والدین ایکتا اور روی شیکھر کو پولیس نے شہریت ترمیم قانون کی مخالفت میں مظاہرہ کرنے کے الزام میں گرفتار کیا تھا۔ 14 دن بعد چمپک کی ماں کو رہا کیا گیا، اس دن سے اب تک کیا ہوا، تفصیل سے بتا رہی ہیں ایکتا۔

فوٹو: اے این آئی

شہریت قانون: 14مہینے کی بچی کے ماں-باپ کے ساتھ بنارس کے 56 مظاہرین کو ملی ضمانت

شہریت ترمیم قانون کی مخالفت میں 19 دسمبر کو وارانسی کے بینیا علاقے سے نکالے مارچ میں شامل 14 مہینے کی بچی کے سماجی کارکن ماں- باپ کے ساتھ 73 لوگوں کو پولیس نے گرفتار کیا تھا۔ اس میں سماجی کارکنوں کے ساتھ لیفٹ پارٹی ممبر اور طلبا بھی شامل تھے۔

پروفیسر فیروز کان/ فوٹو: بہ شکریہ فیس بک

بی ایچ یو: مسلم پروفیسر فیروز خان کا سنسکرت ڈپارٹمنٹ سے استعفیٰ، آرٹس فیکلٹی جوائن کی

بی ایچ یو کے سنسکرت ودیا دھرم وگیان فیکلٹی کے لٹریچر ڈپارٹمنٹ میں اسسٹنٹ پروفیسر کے طور پر فیروز خان کی تقرری کا گزشتہ ایک مہینے سے کچھ طلبا مخالفت کر رہے تھے۔طلبا کا کہنا تھا کہ جین،بودھ اور آریہ سماج سے جڑے لوگوں کو چھوڑ کر کسی بھی غیر ہندو کی اس ڈپارٹمنٹ میں تقرری نہیں کی جا سکتی۔

بنارس ہندو یونیورسٹی (فوٹو : پی ٹی آئی)

بی ایچ یو: فیروز خان کی تقرری کی حمایت کر نے والے دلت پروفیسر سے مارپیٹ کی کوشش

بی ایچ یو کے کچھ طالب علم شعبہ سنسکرت میں ڈاکٹر فیروز خان کی تقرری کی مخالفت ان کے مسلمان ہونے کی وجہ سے کر رہے ہیں۔ ڈاکٹر خان کی تقرری کی شعبہ سنسکرت کے دلت پروفیسر نے حمایت کی تھی۔

HBB 2011.00_45_02_04.Still003

بی ایچ یو تنازعہ: کیوں ایک مسلمان سنسکرت نہیں پڑھا سکتا؟

ویڈیو: بنارس ہندو یونیورسٹی (بی ایچ یو)میں طلبا کا ایک گروپ سنسکرت پڑھانے کے لیے ایک مسلم ٹیچر کی تقرری کے خلاف مظاہرہ کر رہا ہے۔اس مدعے پر بی ایچ یو کے افلاطون اور دہلی یونیورسٹی کی پروفیسر کوشل پوار سے بات کر رہی ہیں دی وائر کی سینئر ایڈیٹر عارفہ خانم شیروانی۔

بنارس ہندو یونیورسٹی (فوٹو : پی ٹی آئی)

بی ایچ یو: ’میں نے پوری زندگی سنسکرت کی تعلیم حاصل کی، لیکن اب مجھے احساس کروایا جا رہا ہے کہ میں مسلمان ہوں‘

بی ایچ یو کے سنسکرت ودیالیہ دھرم وگیان سنستھان میں مسلمان پروفیسر کی تقرری  کا معاملہ : مظاہرے  کی قیادت  کر رہے سنسکرت ودیالیہ دھرم وگیان سنستھان کے ایک اسٹوڈنٹ کرشن کمار کا کہنا ہے کہ ، ‘اگر کوئی شخص ہمارے جذبات  یا ثقافت سے وابستہ نہیں  ہے […]

بنارس ہندو یونیورسٹی (فوٹو : پی ٹی آئی)

بی ایچ یو کے شعبہ سنسکرت میں مسلمان پروفیسر کی تقرری پر ہنگامہ، دھرنے پر بیٹھے طلبا

بی ایچ یوکے سنسکرت ودیا دھرم وگیان فیکلٹی کے شعبہ ادب میں اسسٹنٹ پروفیسر کے طور پر فیروز خان کی تقرری کی کچھ طلبا مخالفت کر رہے ہیں۔طلبا کا کہنا ہے کہ جین، بودھ اور آریہ سماج سے جڑے لوگوں کو چھوڑکر کسی بھی غیر ہندو کی اس شعبہ میں تقرری نہیں کیا جا سکتی۔

BHU-BANNER

بی ایچ یو: جنسی استحصال کے ملزم  پروفیسر کو چھٹی پر جانے کو کہا گیا

بی ایچ یو کے وی سی راکیش بھٹناگر نے بتایا کہ پروفیسر ایس کے چوبے کی بحالی کے فیصلے پر ایگزیکٹو کاؤنسل از سر نو غور کرے گی۔ کاؤنسل کا آخری فیصلہ آنے تک پروفیسر چوبے کو چھٹی پر جانے کو کہا گیا ہے۔

carousel_final-1

محسن شیخ قتل معاملے کا 5 سال: اہل خانہ کو نہیں ہے انصاف کی امید…

محسن کا قتل کوئی عام معاملہ نہیں تھا۔ ملزم پکڑے گئے تھے۔ گواہ موجود ہیں۔ اس کے باوجود انصاف کے لئے وقت لگایا گیا۔ میرے والد جس سماج پر اور اس کے عدلیہ پر اعتماد کے ساتھ جی رہے تھے، اس نے ان کے اعتماد کو توڑ دیا۔ میرے بھائی کے ساتھ ہوئی ناانصافی کا درد لےکرمیرے والد چل بسے۔ اب انصاف ہوتا بھی ہے تو، میرے لئے وہ عدالت کا فیصلہ محض ہوگا۔

استارٹ اپ ینگ اسکلڈ انڈیا کے سی ای او نیرج شریواستو (کولاژ : درگ چندر)

کیا ہےIIT-BHU کے ’آدرش بہو ‘بنانے والے اسٹارٹ اپ کا سچ؟

’ آدرش بہو ‘ٹریننگ کی خبر آنے کے بعد آئی آئی ٹی بی ایچ یو نے اسٹارٹ اپ ’ ینگ اسکلڈ انڈیا ‘ سے کسی بھی طرح کا تعلق ہونے سے انکار کیا ہے لیکن مقامی اخباروں کو کھنگالیں تو اس کو ’ آئی آئی ٹی بی ایچ یو کا اسٹارٹ اپ ‘ بتانے والی تمام خبریں لمبے وقت سے چھپتی رہی ہیں۔

MohsinSheikh

محسن شیخ قتل معاملہ:مذہب کی بنیاد پر کسی قتل کو جائز نہیں ٹھہرایا جاسکتا: سپریم کورٹ 

محسن کے مبینہ طور پر ڈاڑھی رکھنے اور ہرے رنگ کی شرٹ پہننے پر 2014 میں اس کا قتل کر دیا گیا تھا۔ سپریم کورٹ نے تمام ملزمین کو پھر سے حراست میں لینے کی ہدایت دی۔ ممبئی ہائی کورٹنے ملزمین کو ضمانت دے دی تھی۔

Photo: Facebook

بی ایچ یو ہندوستانیت کی علامت، جے این یو غیرہندوستانیت کی :سنگھ 

سنگھ سے متعلق ہفتہ وار میگزین پانچ جنیہ اور آرگنائزر کے 70 سال پورے ہونے کے موقع پر منعقد ایک تقریب میں سنگھ کے سینئر لیڈر منموہن ویدھ نے کہا یہ میگزین آر ایس ایس کے ترجمان نہیں راشٹر وادی پبلی کیشنز ہیں۔

Don`t copy text!