دہلی الیکشن 2020

طاہر حسین۔ (فوٹو: دی وائر/ویڈیوگریب)

دہلی پولیس کے پاس طاہر حسین کو فسادات سے جوڑ نے کا کوئی ثبوت نہیں: وکیل

گزشتہ دنوں دہلی پولیس نے دعویٰ کیا کہ عآپ کےسابق کونسلر طاہرحسین نے شمال مشرقی دہلی میں ہوئے فسادات میں شامل ہونے کی بات قبول کرلی ہے۔حسین کے وکیل جاوید علی کا کہنا ہے کہ ان کے موکل نے کبھی اس طرح کا کوئی بیان نہیں دیا۔ پولیس کے پاس اپنے دعووں کی تصدیق کے لیے کوئی ثبوت نہیں ہے۔

(فائل فوٹو: رائٹرس)

دہلی فسادات: ایل جی کے آرڈر پر پیروی کے لیے سالیسیٹر جنرل تشار مہتہ سمیت چھ وکیلوں کی تقرری

دہلی سرکار نے اس سے پہلے دہلی پولیس کی جانب سے بتائے گئے وکیلوں کے ناموں کوقبول کرنے سے منع کر دیا تھا۔ایل جی انل بیجل نے سرکار کے آرڈر کو خارج کرتے ہوئے پولیس کی جانب سے بھیجے گئے وکیلوں کے نام کو قبول کرنے کو کہا۔

فوٹو: رائٹرس

دہلی فسادات: جب راجدھانی تشدد کی آگ میں جل رہی تھی، تب وزیر داخلہ اور وزارت کیا کر رہے تھے؟

خصوصی مضمون: فروری کےآخری ہفتے میں شمال مشرقی دہلی میں جو کچھ بھی ہوا اس کی اہم وجہوں میں سے ایک سینٹرل فورسز کو تعینات کرنے میں ہوئی تاخیرہے۔ ساتھ ہی وزیر داخلہ کا یہ دعویٰ کہ تشدد25 فروری کو رات 11 بجے تک ختم ہو گیا تھا،سچ کی کسوٹی پر کھرا نہیں اترتا۔

فوٹو: پی ٹی آئی

دہلی فسادات : وکیلوں کی تقرری کے سلسلے میں دہلی سرکار نے پولیس کی تجویز کو خارج کیا

دہلی کابینہ کی میٹنگ میں وکیلوں کی تقرری کے سلسلےمیں دہلی پولیس کی تجویز کو نامنظور کرتے ہوئے کہا گیا کہ دنگا معاملے میں پولیس کی جانچ کو عدالت نے غیرجانبدارنہیں پایا ہے، اس لیے پولیس کے پینل کو منظوری دی گئی، تو معاملوں کی غیرجانبدارشنوائی نہیں ہو پائےگی۔

AKI 20 July 2020.00_36_01_20.Still002

دہلی فسادات کا سچ: پولیس چارج شیٹ بنام دہلی اقلیتی کمیشن

ویڈیو: شمال مشرقی دہلی میں فروری میں ہوئے فرقہ وارانہ فسادات میں 53 لوگ مارے گئے تھے۔ دہلی پولیس نے جون میں عدالت میں دائر کئی چارج شیٹ میں دعویٰ کیا ہے کہ یہ فرقہ وارانہ تشدد نریندرمودی سرکار کو بدنام کرنے کی سازش کا نتیجہ تھا۔ اس مدعے پر سپریم کورٹ کے وکیل ایم آر شمشاد سے عارفہ خانم شیروانی کی بات چیت۔

]

دہلی تشدد: کئی کیس فری میں لڑ نے والے ایک وکیل، کیوں اٹھا رہے ہیں جانچ پر سوال؟

ویڈیو: فروری میں ہوئے دہلی فسادات سے متعلق تقریباً50 کیس وکیل عبدالغفار اکیلے لڑ رہے ہیں۔ ان میں سے لگ بھگ آدھے کے لیے وہ فیس بھی نہیں لے رہے۔ دہلی فسادات میں ہو رہی جانچ اور گرفتاریوں پر لگاتار سوال اٹھ رہے ہیں۔ عبدالغفار کا بھی ماننا ہے کہ جانچ میں شواہد سے پہلے ایک نیریٹو سیٹ کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔

فوٹو : پی ٹی آئی

دہلی انتخاب کے دوران بی جے پی رہنماؤں کے اشتعال انگیز بیانات کے بعد فسادات ہو ئے: رپورٹ

فروری2020 میں شمال مشرقی دہلی میں ہوئے فسادات پر دہلی اقلیتی کمیشن کی جانب سے جاری رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ بی جے پی رہنما کپل مشراکی تقریر کے بعد فسادات شروع ہوئے تھے لیکن اب تک ان کے خلاف کوئی کیس درج نہیں کیا گیا ہے۔

A woman casts her vote at a polling station during the sixth phase of the general election, in New Delhi, India, May 12, 2019. REUTERS/Anushree Fadnavis - RC1C65C4F5F0

دہلی نے بےداغ امیج کے امیدواروں کے مقابلے مجرمانہ معاملوں کے 26 ملزمین کو ایم ایل اے منتخب کیا: اے ڈی آر

ایسوسی ایشن فار ڈیموکریٹک ریفارمس اور دہلی الیکشن واچ کی رپورٹ کے مطابق، دہلی میں صرف 8 ایم ایل اے ہیں، جن کے خلاف کوئی کیس درج نہیں ہے اور انہوں نے ان امیدواروں کو ہرایا، جن کے خلاف مجرمانہ معاملے درج ہیں۔

فوٹو بہ شکریہ: ٹوئٹر

عآپ کی کامیابی میں پاکستان کے وزیرا عظم عمران خان کے لیے کیا سبق ہے؟

ہندوستان میں لوگ بھول گئے تھے کہ سیاست کا مقصد گورننس،  صحت عامہ، تعلیم اور سرکاری سروسز کی فراہمی کو آسان بنا ناہوتا ہے۔ اس کا مطلب تو اب  فرقہ بندی، ایک دوسرے کی پگڑی اچھالنا اور اکثریتی طبقہ میں خوف کا ماحول پیدا کرکے ان سے ووٹ […]

علامتی فوٹو:پی ٹی آئی

کیا بی جے پی انگریزوں کی پھوٹ ڈالو-راج کرو والی پالیسی پر چل رہی ہے؟

سی اے اے-این آر سی کے خلاف ہو رہے مظاہرے میں طویل عرصے کے بعدہندو-مسلم یکجہتی پھر سے نظر آ رہی ہے، جس سے حکمراں بی جے پی میں بےچینی دیکھی جاسکتی ہے۔ ایسی ہی بےچینی 1857 کی انقلاب کے بعد انگریزوں میں دکھی تھی، جس سےنپٹنے کے لئے انہوں نے پھوٹ ڈالو-راج کرو کی پالیسی اپنائی تھی۔

Prakash-javadekar-PHOTO-FB-Page g

دہلی اسمبلی الیکشن میں کانگریس کے اچانک غائب ہونے سے ہاری بی جے پی: پرکاش جاویڈکر

مرکزی وزیر پرکاش جاویڈکر نے ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ دہلی الیکشن میں کانگریس کے اچانک غائب ہونے کی وجہ سے ان کی پارٹی اور عام آدمی پارٹی کے بیچ سیدھا مقابلہ ہو گیا، جس کی وجہ سےبی جے پی کی ہار ہوئی۔

فوٹو: پی ٹی آئی

دہلی کے مینڈیٹ نے کہا، کیجریوال دہشت گرد نہیں، دیش بھکت ہیں: سنجے سنگھ

بی جے پی ایم پی پرویش ورما نے انتخابی تشہیر کے دوران ایک ریلی میں کیجریوال کو شاہین باغ میں سی اے اےکے خلاف چل رہے مظاہرے کو مبینہ طور پرحمایت دینے کاالزام لگاتے ہوئے انہیں ‘دہشت گرد’ بتا دیا تھا۔

فوٹو: پی ٹی آئی

دہلی اسمبلی انتخاب: ہائی پروفائل سیٹوں کا حال، منیش سسودیا آگے، کپل مشرا اور الکا لامبا پیچھے

دہلی اسمبلی انتخاب میں عام آدمی پارٹی، بی جےپی اور کانگریس کے کئی قدآور رہنما جہاں بڑے فرق سے اپنی سیٹیں جیتتے دکھائی دے رہے ہیں وہیں کئی اہم چہرے ہارتے ہوئے نظر آ رہے ہیں۔

فوٹو: پی ٹی آئی

دہلی میں ایک بار پھر عام آدمی پارٹی کی حکومت

سال 2015 کے دہلی اسمبلی الیکشن میں 67 سیٹیں جیتنے والی عام آدمی پارٹی کو اس بار 62 سیٹیں حاصل ہوئی ہیں۔ وہیں، بی جے پی کو اس بار 8 سیٹیں ملی ہیں۔ پچھلے الیکشن میں زیرو پر رہی کانگریس اس باربھی کھاتہ نہیں کھول سکی اور اس کے 63 امیدواروں کی ضمانت ضبط ہو گئی۔

فوٹو: پی ٹی آئی

دہلی اسمبلی انتخاب: آزاد ہندوستان کے تقریباً تمام انتخاب دیکھ چکیں منڈل نے 111 کی عمر میں ڈالا ووٹ

غیر منقسم ہندوستان کے باریسال(اب بنگلہ دیش میں)میں 1908 میں پیدا ہوئیں منڈل نے برصغیر کو کئی برے دورے سے گزرتے ہوئے دیکھا ہے۔ انہوں نے 1947 کابٹوارہ اور 1971 کا پاکستان –بنگلہ دیشن بٹوارہ بھی دیکھا ہے۔دریں اثنا دن کے دو بجے تک 28.14فیصد ووٹ ڈالے جا چکے ہیں ۔

ویسٹ ونود نگر پٹ پڑگنج اسمبلی(فوٹو : دی وائر)

دہلی اسمبلی انتخاب: پٹ پڑگنج میں پانی پر ہے انتخابی لڑائی

پٹ پڑگنج اسمبلی حلقہ میں اقتدار اور حزب مخالف دونوں کے مطابق یہاں کا اہم مدعا پانی ہے۔ جہاں حکمراں عام آدمی پارٹی اور اس کے حامیوں کا کہنا ہے کہ انہوں نے لوگوں کو مفت پانی کی سہولت دی، وہیں حزب مخالف کا الزام ہے کہ اس مسئلےپر کیجریوال حکومت ناکام ہوئی ہے۔

شاہین باغ (فوٹو : رائٹرس)

دہلی اسمبلی الیکشن: رائے دہندگان کو کتنا متاثر کرے‌ گا شاہین باغ؟

دہلی اسمبلی الیکشن کے مدنظر بی جے پی، عام آدمی پارٹی اور کانگریس پر حملہ کرنے کے لئے شاہین باغ میں شہریت ترمیم قانون کے خلاف قریب دو مہینے سے چل رہے مظاہرے کا استعمال کر رہی ہے۔ یہ مدعا نہ صرف بی جے پی کے مقامی رہنما اٹھا رہے ہیں بلکہ وزیر اعظم نریندر مودی اور وزیر داخلہ امت شاہ سمیت ہر بی جے پی رہنما شاہین باغ کے مظاہرے کے نام پر دہلی کے رائےدہندگان کو متاثر کرنے کی کوشش کرتے دکھے ہیں۔

0502 Sikh Story.00_14_09_22.Still005

پنجاب سے شاہین باغ پہنچے کسانوں نے کہا، مذہب کی بنیاد پر دوسرا بٹوارہ نہیں ہو نے دیں گے

ویڈیو : شہریت قانون اور این آر سی کے خلاف گزشتہ تقریباً دو مہینے سے دہلی کے شاہین باغ میں مظاہرہ کررہے لوگوں کو اپنی حمایت دینے پنجاب کی ایک کسان تنظیم کے 350 کسان شاہین باغ پہنچے ہیں ، جن میں 15 خواتین بھی ہیں ۔ ان سے ریتو تومر کی بات چیت۔

سپریم کورٹ (فوٹو : پی ٹی آئی)

شاہین باغ سے دھرنا ہٹانے کی عرضی سپریم کورٹ نے ملتوی کی، کہا-ابھی الیکشن ہے، سوموار کو آئیے

امت ساہنی نامی ایک وکیل نے یہ عرضی دائر کی ہے۔ ساہنی دہلی ہائی کورٹ بھی گئے تھے لیکن کورٹ نے ان کی عرضی خارج کر دی تھی اور کہا تھا کہ متعلق محکمہ اس معاملے کو دیکھیں۔ حالانکہ کورٹ نے اس بارے میں کوئی رسمی ہدایت جاری نہیں کی تھی۔

0302 Ritu Mangolpuri

دہلی اسمبلی الیکشن: کیا منگول پوری سیٹ سے بی جے پی کھاتہ کھول پائے گی؟

ویڈیو: دہلی کے منگول پوری اسمبلی حلقےمیں عام آدمی پارٹی کی طرف سے ایک بار پھر راکھی بڑلان انتخابی میدان میں ہیں۔ کانگریس سے راجیش لیلوٹیا اور بی جےپی سے کرم سنگھ کرما کو ٹکٹ دیا گیا ہے۔ ایس سی کے لیے ریزرو اس سیٹ سے بی جے پی ایک بار بھی کھاتہ نہیں کھول پائی ہے۔ علاقے کےتمام مدعوں پر مقامی لوگوں سے ریتو تومر کی بات چیت۔

AKI 5 Feb 2020.00_15_58_18.Still005

دہلی کے سرکاری اسکول پر اروند کیجریوال کے دعووں پر کیا بولے لوگ؟

ویڈیو: 2015 میں دہلی اسمبلی الیکشن جیتنے کے بعد کیجریوال حکومت نے سرکاری اسکولوں کو پرائیویٹ اسکولوں سے بہتر بنانے کا وعدہ کیا تھا۔ گزشتہ 5 سال میں سرکاری اسکول اور ایجوکیشن کتنی بدلی، اس پر بچوں، اساتذہ اور گارجین سے ریتو تومر کی بات چیت۔

3101 Patparganj Santoshi.00_13_30_15.Still002

دہلی اسمبلی الیکشن: ’عوام کے لیے جو کام کرے گا، وہی گدی پر بیٹھے گا‘

ویڈیو: مشرقی دہلی کے پٹ پڑ گنج اسمبلی حلقے سے دہلی کے نائب وزیراعلیٰ منیش سسودیا عام آدمی پارٹی کے امیدوار ہیں۔ ان کے سامنے بی جے پی نے روی نیگی اور کانگریس نے لکشمن راوت کو اپنا امیدوار بنایا ہے۔ اس علاقے کے رائے دہندگان سے سنتوشی مرکام کی بات چیت۔

فوٹو: پی ٹی آئی

دہلی بی جے پی نے عام آدمی پارٹی کو بھیجا 500 کروڑ روپے کا ہتک عزت کا نوٹس

عام آدمی پارٹی کے ذریعے سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو شیئر کیا گیا تھا، جس میں دہلی بی جے پی صدر منوج تیواری عآپ کے تشہیری نغمہ پر ڈانس کرتے نظر آ رہے ہیں۔ تیواری نے کہا کہ ویڈیو کے بارے میں الیکشن کمیشن سے شکایت کی گئی ہے۔

Don`t copy text!