عآپ حکومت

 وزیر داخلہ امت شاہ(فوٹو : پی ٹی آئی)

جے این یو تشدد: ’ٹکڑے-ٹکڑے‘ گینگ کو سزا دینے والے بیان کے لیے امت شاہ کو بنایا جا رہا ہے نشانہ

وزیر داخلہ امت شاہ نے کہا تھا کہ دہلی میں بد امنی کے لیے کانگریس پارٹی کی قیادت میں ٹکڑے ٹکڑے گینگ ذمہ دار ہے،ان کو سزا دینے کا وقت آ گیا ہے۔ دہلی کی عوام کو سزا دینا چاہیے۔

مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ۔ (فوٹو : پی ٹی آئی)

’ٹکڑے-ٹکڑے‘ گینگ کو سزا دینے کا وقت آ گیا: امت شاہ

دہلی ڈیولپمنٹ اتھارٹی کے ذریعے منعقد ایک پروگرام کو خطاب کرتے ہوئے وزیر داخلہ امت شاہ نے کہا کہ دہلی میں بد امنی کے لیے کانگریس پارٹی کی قیادت میں ٹکڑے ٹکڑے گینگ ذمہ دار ہے،ان کو سزا دینے کا وقت آ گیا ہے۔ دہلی کی عوام کو سزا دینا چاہیے۔

اروند کیجریوال(فوٹو : پی ٹی آئی)

مرکزی حکومت نے اروند کیجریوال کو ڈنمارک کلائمیٹ چینج کانفرنس میں شامل ہونے کی نہیں دی اجازت

عام آدمی پارٹی نے کہا کہ تقریباً ڈیڑھ مہینے پہلے درخواست کے باوجود دہلی کے وزیراعلیٰ اروند کیجریوال کو ڈنمارک میں ہونے والے سی-40 کلائمیٹ چینج کانفرنس میں شامل ہونے کی منظوری نہیں ملی، جبکہ اسی پروگرام کے لئے مغربی بنگال کے وزیر کو اجازت مل گئی ہے۔

 مشرقی دہلی کے پٹپڑگنج کا محلہ کلینک(تمام فوٹو : سنتوشی مرکام)

دہلی کی عوام کی امیدوں پر کتنے کھرے اترے محلہ کلینک؟

گراؤنڈ رپورٹ: صحت سے متعلق خدمات کی عوام تک رسائی کے مقصدسے 2016 میں دہلی حکومت نے محلہ کلینک کی شروعات کی تھی۔ حکومت کا وعدہ ایک ہزار کلینک کھولنے کاتھا، لیکن فی الحال دہلی کے مختلف علاقوں میں ایسے 210 کلینک کام کر رہے ہیں۔

PyvplQZq

گراؤنڈ رپورٹ: دہلی کے محلہ کلینک کی زمینی حقیقت

ویڈیو: دہلی کی عام آدمی پارٹی حکومت نے 2016 میں محلہ کلینک کی شروعات کی تھی۔ حکومت کا وعدہ پورے دہلی میں ہزار محلہ کلینک کھولنے کا تھا،لیکن موجودہ وقت میں دہلی کے مختلف علاقوں میں 210 محلہ کلینک کام کر رہے ہیں۔ دی وائر کی سنتوشی مرکام نے ایسے ہی کچھ محلہ کلینک کا دورہ کیا اور صورت حال جاننے کی کوشش کی۔

فوٹو: پی ٹی آئی

سپریم کورٹ کا فیصلہ، 6 میں سے 4 معالے ایل جی کے حق میں

سپریم کورٹ نے دہلی حکومت اور ایل جی کے دائرہ اختیارات کو لے کر فیصلہ سنایا ہے، جس میں اینٹی کرپشن بیورو اور جانچ کمیشن کو مرکزی حکومت کے ماتحت رکھا گیا ہے جبکہ الیکٹرسٹی اور ریوینو محکمہ کو دہلی حکومت کے ماتحت رکھا گیا ہے۔

Don`t copy text!