یوپی

پرینکا گاندھی (فائل فوٹو : پی ٹی آئی)

پرینکا گاندھی کا کرشمہ بھی یوپی میں کانگریس کو ہار سے نہیں بچا سکتا

ہندوستانی سیاست میں کرشمائی قیادت نے کئی کرشمے دکھائے ہیں، لیکن کسی بھی دور میں کرشمہ کے مقابلے زمینی فارمولے اور کمیونٹیز کی صف بندیاں زیادہ مؤثر رہی ہیں۔ فی الحال کانگریس کم سے کم یوپی میں تو ان دونوں مورچوں پر پچھڑتی نظر آ رہی ہے۔

علامتی فوٹو: ورون گاندھی/فیس بک

اتر پردیش : کمبل غریب کو اور منھ کیمرے کی طرف!

اتر پردیش میں ایم ایل اے سرکاری خزانے سے غریبوں کو کمبل کے ساتھ سرکاری اسکولوں کے طلبا کو جوتے-موزے اور سویٹر بھی بانٹ رہے ہیں۔ مگر اس ادا سے جیسے ان کی بڑی مہربانی کہ جنوری میں بانٹ دے رہے ہیں ورنہ مارچ-اپریل میں بانٹتے تو کوئی کیا کر لیتا؟

Photo: Reuters

اتر پردیش : ختم ہو سکتی ہے 2300 مدرسوں کی منظوری، چھٹیو ں میں کٹوتی

ٹیچرس ایسوسی ایشن مدارسِ عربیہ نے الزام لگایا کہ اقلیتی فلاح و بہبود افسر کو رشوت نہ دے پانے کی وجہ سے کچھ مدرسوں کی تفصیل سرکاری پورٹل پر نہیں آ پا رہی ہے۔ چھٹیاں کم کرنے کو لےکر وزیراعلیٰ سے نظرثانی کی مانگ۔

Yogi-Adityanath-Facebook

یوپی  میں پہلا موقع ہے جب وزیراعلیٰ بلدیاتی انتخاب کی کیمپین کر رہے ہیں :سماجوادی پارٹی

وزیراعلی ٰنے دعویٰ کرتے ہوئے کہا، آج ہماری حکومت کو آٹھ مہینہ پورے ہوئے ہیں اور اس دور میں ایک بھی فساد نہیں ہوا۔ 22کروڑ باشندوں کو حفاظت دینے کے لئے حکومت پوری طرح سے پرعزم ہے۔ لکھنؤ:سماجوادی پارٹی (سپا )نے اتوار کو کہا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی اپنی […]