2002 Naroda Gam riot

سپریم کورٹ (فوٹو : پی ٹی آئی)

نرودا پاٹیا فساد معاملے میں مجرم بابو بجرنگی کو سپریم کورٹ نے دی ضمانت

سال 2002 میں گجرات کے گودھرا میں سابرمتی ایکسپریس میں آگ لگنے کے ایک دن بعد ریاست میں بھڑکے فسادات میں احمد آباد کے نرودا پاٹیا علاقے میں 28 فروری، 2002 کو بھیڑ نے 97 لوگوں کا قتل کر دیا تھا۔ اس حادثہ میں مارے گئے زیادہ تر لوگ اقلیتی کمیونٹی کے تھے۔ اس قتل معاملے میں مجرم قرار دیے جانے کے بعد سے بابو بجرنگی سابرمتی سینٹرل جیل میں بند تھے۔

سپریم کورٹ (فوٹو : پی ٹی آئی)

نرودا پاٹیا فساد: 10 سال کی سزا پانے والے 4 مجرموں کو ملی ضمانت

سال 2002 میں گجرات کے گودھرا میں سابرمتی ایکسپریس میں آگ لگنے کے ایک دن بعد ریاست میں ہوئے فسادات میں احمد آباد کے نرودا پاٹیا علاقے میں بھیڑ نے 97 لوگوں کا قتل کر دیا۔ مارے گئے زیادہ تر لوگ اقلیت کمیونٹی کے تھے۔

امت شاہ (فوٹو : رائٹرس) گجرات فسادات (فائل فوٹو : پی ٹی آئی) مایا کوڈنانی (فوٹو : پی ٹی آئی)

نرودا گام فسادات: ایس آئی ٹی نے کہا، کوڈنانی تقریباً10 منٹ  تک جائے  واردات پر موجود تھیں

گزشتہ 2 اگست کو ایس آئی ٹی نے مایا کوڈنانی کے حق میں دئے گئے بی جے پی صدر امت شاہ کے بیان کے مستند ہونے پر سوال اٹھایا تھا۔ 2002 میں نرودا گام میں ہوئے فسادات کے دوران مسلم کمیونٹی کے 11 لوگوں کا قتل کر دیا گیا تھا۔

Amit Shah_Maya Kodnani

ویڈیو : نرودا گام کیس میں امت شاہ کے بیان سے کوئی فرق نہیں پڑنے والا

نئی دہلی :نروداگام معاملے میں فریق دفاع کے گواہ کے طورپربھارتیہ جنتا پارٹی کے قومی صدرامت شاہ کے بیان پرتبصرہ کرتے ہوئے سنیئر صحافی اور’دی فکشن آف فیکٹ فائنڈنگ:مودی اینڈگودھرا’کے مصنف منوج مٹّا کا کہنا ہے کہ امت کے شاہ کے بیان سے اس کیس پر کوئی فرق […]

Amit Shah_Maya Kodnani

گجرات فسادادت : نرودا گام میں واردات کے دن ایوان اسمبلی میں تھیں مایا کوڈنانی : امت شاہ

گجرات میں سال 2002 میں ہوئے سانحہ میں سابق وزیر کوڈنانی کی جانب سے بطور گواہ پیش ہوئے بی جے پی صدر امت شاہ۔ احمد آباد/نئی دہلی : سال 2002 میں نرودا گام میں ہوئے سانحہ  میں گجرات کی سابق وزیر اور بی جے پی لیڈر مایا کوڈنانی […]

Don`t copy text!