Communal Attack

0109 GONDI.00_32_24_14.Still004

متھرا ڈوسا اسٹال پر فرقہ وارانہ حملہ، ملزم کی پہچان ہوئی

ویڈیو: اتر پردیش کےمتھرا میں شری ناتھ ڈوسا اسٹال پر دیوراج پنڈت اور راشٹریہ ہندو یووا واہنی کے کچھ کارکنوں نے گزشتہ18 اگست کو ایک مسلمان کے کام کرنے کی وجہ سے حملہ کر دیا تھا۔ حملے کے بعد اس کا نام بدل کر امریکن ڈوسا کارنر نام دیا گیا ہے۔ اسے لےکر دی وائر نے کچھ فوڈاسٹال مالکوں اور ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ آف پولیس ورون کمار سنگھ سے ملاقات کی اور دیوراج پنڈت کے ایک دوست سے بھی بات کی، جو ہندوتواکارکنوں کے گروپ کا حصہ ہے، جس نے اسٹال پر حملہ کیا تھا۔

یتی نرسنہانند (بائیں)کے ساتھ متھرا میں مسلم ڈوسا فروش کے اسٹال پر حملہ کرنےکے ملزم  ہندوتواکارکن  دیوراج پنڈت (فوٹو بہ شکریہ : فیس بک)

یوپی: متھرا میں ڈوسا اسٹال پر فرقہ وارانہ حملے کے بعد مسلمان مزدوروں کو نوکری جانے کا اندیشہ

اتر پردیش کے متھرا کی وکاس مارکیٹ میں18اگست کو ہندوتوا کے کارکنوں نے ڈوسا بیچنے والے ایک مسلمان کے اسٹال پر توڑ پھوڑ کی تھی۔ حملہ آوروں کا الزام ہے کہ مسلمان ہوکر ڈوسا فروش نےدکان کا نام ہندو بھگوان شری ناتھ کے نام پر رکھا ہے۔ معاملے کا ویڈیو پولیس کے علم میں آنے کے بعد گزشتہ 28 اگست کو متھرا کے کوتوالی تھانے میں ایف آئی آر درج کی گئی۔

Don`t copy text!