Crime in Uttar Pradesh

فوٹو: دی وائر

سون بھدر قتل عام معاملے میں کمیٹی نے سونپی رپورٹ، 20 ہزار بیگھہ زمین پر غیر قانونی قبضے کا انکشاف

اتر پردیش کے سون بھدر ضلع کے امبھا گاؤں میں جولائی2019 میں زمینوں پر مبینہ غیر قانونی قبضہ کے خلاف جب آدیواسیوں اور گاؤں والوں نےآواز اٹھائی تھی، تب لینڈ مافیاؤں کے ساتھ ہوئے خونی تصادم میں11 لوگوں کی موت ہوگئی تھی۔ اس معاملے میں سون بھدر پولیس نے 65 لوگوں کو گرفتار کیا تھا اور 51لوگوں کے خلاف فردجرم داخل کیا تھا۔

Hardoi-Uttar-Pradesh-e1536656109825

اتر پردیش: اوبی سی لڑکی سے محبت کی وجہ سے دلت لڑکے کو زندہ جلایا

واقعہ ہردوئی ضلع کے بھدیچہ گاؤں کا ہے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ 20 سالہ دلت لڑکے کو مبینہ طور پر دوسری ذات کی ایک لڑکی سے تعلق کی وجہ سے لڑکی کے گھر والوں نے چار پائی سے باندھ کر زندہ جلا دیا۔معاملے کی جانکاری کے بعد اس صدمہ سے لڑکے کی ماں کی بھی موت ہو گئی۔

(فوٹو : پی ٹی آئی)

اتر پردیش: میرٹھ میں سبھارتی یونیورسٹی کے سپرنٹنڈنٹ کا پیٹ پیٹ‌کر قتل

پولیس نے بتایا کہ 45 سالہ سنجے گوتم سبھارتی یونیورسٹی میں سائنس ڈپارٹمنٹ آفس کے سپرنٹنڈنٹ تھے۔یونیورسٹی سے گھر لوٹنے کے دوران تین بائیک سے آئے 9 بدمعاشوں نے ان کو گھیر لیا اور پھر مبینہ طور پر پیٹ پیٹ‌کر ان کا قتل کر دیا۔

Sonbhadra Edit.00_37_54_14.Still006

سون بھدر سے قتل عام کی پوری کہانی

ویڈیو: گزشتہ 17 جولائی کو گاؤں کے پردھان یگیہ دت اور ان کے حمایتیوں کے ذریعے گھیراول تحصیل کے اوبھا گاؤں میں 90 بیگھا زمین پر قبضہ کو لے کر ہوئے تنازعہ میں 10 لوگوں کی موت ہو گئی تھی جبکہ 28 دیگر زخمی ہو گئے تھے۔ اسی مدعے پر دی وائر کی سینئر ایڈیٹر عارفہ خانم شیروانی نے سون بھدر کے اوبھا گاؤں جاکر آدیواسیوں سے بات چیت کی۔

فوٹو: پی ٹی آئی

سون بھدر قتل عام: حراست میں  رکھی گئیں پرینکا گاندھی سے متاثرہ آدیواسی فیملی کے 12 لوگوں نے ملاقات کی

سون بھدر ضلع‎ کے اوبھا گاؤں میں 17 جولائی کو زمین تنازعہ کو لےکر ہوئے تشدد میں 10 لوگوں کی موت ہو گئی تھی اور تقریباً 24 لوگ زخمی ہوئے تھے۔ جمعہ کو متاثرین سے ملنے جا رہیں پرینکا گاندھی کو مرزاپور میں روکنے کے بعد حراست میں لے لیا گیا تھا۔

کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی (فوٹو بہ شکریہ : اے این آئی)

یوپی: سون بھدر کے متاثرین سے ملنے جا رہیں پرینکا گاندھی کو حراست میں لیا

سون بھدر ضلع‎ کے اوبھا گاؤں میں 17 جولائی کو زمین تنازعہ کو لےکر ہوئے تشدد میں 10 لوگوں کی موت ہو گئی تھی اور تقریباً 24 لوگ زخمی ہوئے تھے۔ جمعہ کو متاثرین سے ملنے جا رہیں پرینکا گاندھی کو مرزاپور میں روکنے کے بعد حراست میں لے لیا گیا۔ کانگریس نے کہا، یوگی حکومت کی تاناشاہی کی بدترین مثال۔

یوگی آدتیہ ناتھ (فوٹو بہ شکریہ: اے این آئی)

اترپردیش میں گزشتہ 24 گھنٹے میں 2 پولیس اہلکاروں سمیت 11 لوگوں کا قتل

پہلا واقعہ اتر پردیش کے سنبھل کا ہے، جہاں پولیس اہلکاروں کی وین پر حملہ کرکے بدمعاش تین قیدیوں کو چھڑا لے گئے اور دو پولیس اہلکاروں کا قتل کر دیا۔ دوسرےواقعہ میں سون بھدر ضلع میں زمین تنازعے میں 3 خواتین سمیت 9 لوگوں کا گولی مار‌کر قتل کر دیا گیا۔

مختار انصاری/ فوٹو: بہ شکریہ فیس بک

بی جے پی رہنما کرشنانند رائے کے قتل معاملے میں بی ایس پی ایم ایل اے مختار انصاری بری

اتر پردیش کے محمد آباد سے بی جے پی ایم ایل اے کرشنانند رائے کا نومبر 2005 میں قتل ہو گیا تھا۔ سی بی آئی کی اسپیشل کورٹ نے بدھ کو مختار انصاری سمیت سبھی ملزمین کو بری کرتے ہوئے کہا کہ اگر گواہ نہیں مکرتے تو اس معاملے میں فیصلہ کچھ اور ہوتا۔

متاثرہ  فیملی کے ساتھ پولیس (فوٹو : راجا چودھری)

اتر پردیش: ہولیکا دہن کی رات  پیٹ پیٹ کر مسلم بزرگ کا قتل

یہ معاملہ سون بھدر ضلع کے اوبرا تھانہ کے پرسوئی گاؤں کا ہے۔ معاملے میں کارروائی کرتے ہوئے پولیس نے 7 لوگوں کو گرفتار کر لیا ہے۔ حالانکہ قتل کا کلیدی ملزم مقامی آر ایس ایس کی شاکھاچلانے والا ٹیچر فرار ہے۔

Don`t copy text!