Indian Army

فائل فوٹو: پی ٹی آئی

کیا کشمیر تاریخ کے بدترین دور سے گزر رہا ہے؟

کشمیر تاریخ کے بدترین دور سے گزر رہا ہے۔ اس دوران جو نسل تیار ہوئی ہے اس کے زخموں پر مرہم لگانا جوئے شیر لانے سے کم نہیں۔ کشمیر میں عسکریت دم توڑ رہی ہے مگر یہ خیال کرنا کہ وہاں امن و امان ہوگیا ہے خود کو دھوکہ دینے کے سوا کچھ نہیں۔

فوٹو : سوشل میڈیا

مودی کی خارجہ پالیسی:پڑوسی ممالک کیلئے عطیہ یا عفریت؟

ایک حساس پڑوسی کے برعکس ہندوستان نے اس خطے میں اپنے آپ کو ایک غیر متوازن پاور کے روپ میں پیش کیا ہے۔پاکستان کو الگ تھلگ کرنے کی نیت سے ہندوستان جنوبی ایشیا ئی تعاون تنظیم سارک میں ایک ذیلی گروپ بنانے کی پلاننگ میں مصروف ہے۔

کارگل 
وار میموریل / فوٹو : پی ٹی آئی

کارگل کی جنگ کا مفصل اور معتبر دستاویز؛’اے سولجرس ڈائری: کارگِل د اِنسائیڈ اسٹوری‘

ڈائری کی طرز پر لکھی گئی یہ کتاب کارگل کی جنگ کا اولین سچا، مفصل اور معتبر دستاویز ہے۔ اس میں ان واقعات کی حقیقی تصویر ملتی ہے کہ کیسے ہماری افواج نے بہادری سے لڑتے ہوئے انہیں مار بھگایا۔

وزیر اعظم نریندر مودی کے ساتھ جموں و کشمیر اسمبلی اسپیکر نرمل سنگھ، ان کی بیوی ممتا سنگھ (فوٹو:بشکریہ  فیس بک / ڈاکٹر نرمل سنگھ)

جموں و کشمیر میں بی جے پی رہنما کی بیوی اور فوج کے بیچ کیوں ٹھن گئی ہے؟

فوج کے گولہ بارود ڈیپو کے نزدیک ممنوعہ علاقے میں کورٹ کے حکم کے باوجود تعمیر کروانے کے معاملے میں فوج کے ذریعے بی جے پی رہنما اور اسمبلی اسپیکر نرمل سنگھ کی بیوی ممتا سنگھ سمیت کئی افسر اور پولیس افسروں کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی کی مانگ کی گئی ہے۔

جموں و کشمیر اسمبلی اسپیکر اور سابق نائب وزیر اعلیٰ نرمل سنگھ (فوٹو : پی ٹی آئی) 

رویش کا بلاگ :فوج پر سوال سے آگ بگولہ ہونے والے بی جے پی رہنماؤں کو اب فوج سے کیوں شکایت ہے؟ 

نرمل سنگھ کتنی آسانی سے فوج کے اعتراض کو سیاسی ارادے سے کیا گیا بتا دیتے ہیں۔ فوج پر ہی لوگوں کو پریشان کرنے کے الزام لگا دیتے ہیں۔ یہ وہ لوگ ہیں جو فوج پر ذرا سا سوال کرنے پر آگ بگولہ ہو اٹھتے ہیں۔ گودی میڈیا کے گھوڑوں کو کھول دیتے ہیں کہ فوج کی بے عزتی ہو رہی ہے۔

جاری گاؤں میں البرٹ میموریل(فوٹو : نیرج سنہا)

پرم ویر البرٹ اکاکی یادگار بنانے کے لیے حکومت بے نیاز کیوں ہے؟

گراؤنڈ رپورٹ : جھارکھنڈ میں پرم ویر چکر فاتح لانس کے جاں باز البرٹ اکاکی یادگار کی تعمیر کی بنیاد رکھے جانے کے 27 مہینے بعد وہاں ایک اینٹ بھی نہیں جوڑی جا سکی ہے۔ اب سماجی سطح پر عوامی حمایت اور اقتصادی مدد جٹاکر اس کو بنانے کی […]

Photo : India Tribune

جمہوریت کا بیرو میٹرکہا جانے والا جنتر منتر خالی ،رام لیلا میدان میں مظاہرہ کرنے کا لگے گا 50ہزار

ایم سی ڈی نے کسی بھی طرح کے احتجاج کے عوض  میں50000 روپے کی مانگ کی ہے۔ نئی دہلی :این جی ٹی کے حکم  کے بعد پولیس جنتر منتر سے مظاہرین کو ہٹانے میں لگی ہے۔ سوموار کو پولیس اور دوسرے افسروں نے 18 مظاہرین کی جماعت کو […]