Rajnath Singh

AKI 30 JUne.00_22_51_03.Still004

کیا ہندوستانی فوج کی موت کا انتقام ٹک ٹاک پابندی ہے؟

ویڈیو: گزشتہ29 جون کو منسٹری آف انفارمیشن اینڈ ٹکنالوجی  نے ہندوستان میں چین کے 59 ایپ پر پابندی عائد کردی ہے۔ ان میں ٹک ٹاک، ہیلو، وی چیٹ، یو سی براؤزر جیسےاہم  ایپ بھی شامل ہیں۔ اس موضوع پر انٹرنیٹ فریڈم  فاؤنڈیشن کے ایگزیکٹو ڈائریکٹراپار گپتا سے دی […]

(فوٹو:  پی ٹی آئی)

کشمیری عوام کو دو مہینے کا ایل پی جی اسٹاک رکھنے کی ہدایت، وادی میں تشویش میں اضافہ

ایسا مانا جا رہا ہے کہ ایل اے سی پرہندوستان اور چین کے مابین جاری تعطل کے تناظرمیں یہ ہدایت دی گئی ہے، حالانکہ حکومت کا کہنا ہے کہ آنے والے وقت میں قومی شاہراہ کے بند ہونے اور لینڈ سلائیڈنگ کے امکانات کو دھیان میں رکھتے ہوئے لوگوں سے سلنڈر کا اسٹاک رکھنے کے لیے کہا گیا ہے۔

وزیر اعظم نریندر مودی، نئی دہلی میں پرسار بھارتی کی بلڈنگ اور چین میں ہندوستانی  سفیروکرم مسری۔

چین معاملے پر انٹرویو سے خفا پرسار بھارتی نے پی ٹی آئی کو ’اینٹی نیشنل‘ کہا

خبر رساں ایجنسی پی ٹی آئی نےجمعہ کی شام کوچین میں ہندوستانی سفیر وکرم مسری کا بیان ٹوئٹ کیا تھا جو چین کے ہندوستان میں دراندازی نہیں کرنے کے وزیراعظم نریندر مودی کے دعوے کے برعکس تھا۔ اس کے بعد پبلک براڈکاسٹر پرسار بھارتی نے پی ٹی آئی کے ساتھ تمام تعلقات کوتوڑنے کی دھمکی دی ہے۔

(فوٹو: رائٹرس)

گلوان گھاٹی: سیٹلائٹ تصویروں میں دکھائی دیے چین کے بنائے ڈھانچے

اسپیس ٹکنالوجی کمپنی میکسرکی جانب سے جاری کی گئیں تصاویردکھاتی ہیں کہ لائن آف ایکچوئل کنٹرول(ایل اے سی)کےنزدیک چین نے دفاعی نقطہ نظرسے ڈھانچے بنائےہیں۔ماہرین کے مطابق ان کی طرف سے اسی کے ذریعے ہندوستانی سرحدمیں دراندازی کی گئی ہوگی۔تصویروں میں ٹینک وغیرہ اورہتھیار سے لیس گاڑیاں بھی دیکھی گئی ہیں۔

(فوٹوبہ شکریہ: cinestaan.com)

ہندوستان اور چین کے دوستانہ تعلقات کی مثال ہے ڈاکٹر کوٹنس کی امر کہانی

خواجہ احمد عباس کی سنیمائی زندگی اور ان کےتخلیقی استعداد کے بارے میں بہت سی باتیں کہی اورلکھی جا چکی ہیں، لیکن آج ہندستان اور چین کے بیچ جاری کشیدگی میں ان کےناول ڈاکٹر کوٹنس کی امر کہانی کی اہمیت زیادہ محسوس ہوتی ہے۔

نئی دہلی میں ویڈیو کانفرنسنگ کےذریعے ہندوستان- چین سرحدی تنازعے پر کل جماعتی اجلاس  کے دوران وزیر اعظم  نریندر مودی۔ (فوٹو: پی ٹی آئی)

حکومت کہہ رہی ہے یہ سیاست کا وقت نہیں ہے، لیکن وہ خود کیا کر رہی ہے

اپوزیشن کے سوال کرنے کو چھوٹا پن بتایا جا رہا ہے۔ 20 جوانوں کی ہلاکت کے بعد کہا گیا کہ بہاررجمنٹ کے جوانوں نے شہادت دی،یہ بہار کے لوگوں کے لیےفخر کی بات ہے۔دوسری ریاستوں کے جوان بھی مارے گئے، ان کا نام الگ سے کیوں نہیں؟ صرف بہار کا نام کیوں؟ کیا یہ بیہودگی نہیں ہے؟

چینی صدر اور ہندوستان کے وزیراعظم۔ (فوٹو: رائٹرس)

کیوں چین کے ساتھ تجارت پر پابندی ہندوستان کے لیے منافع بخش نہیں ہے

ہندوستان اور چین کے مابین تجارتی پابندیاں عائدکرنے سے سب سے زیادہ نقصان متوسط طبقہ اورکم آمدنی والے لوگوں کوبرداشت کرنا پڑےگا۔ ہندوستان میں چین کے بنے سامانوں کی مانگ اس لیے زیادہ ہے، کیونکہ دوسرے ممالک کے سامانوں کے مقابلےیہ سستے اور ہندوستان کی بڑی آبادی کی صلاحیت کے مطابق دستیاب ہیں۔

فوٹو: وکی پیڈیا

لداخ: جو کبھی متحدہ ہندوستان، تبت، چین، ترکستان اور وسط ایشیا کی ایک اہم گزر گاہ تھا…

افغانستان کی طرح یہ خطہ بھی عالمی طاقتوں کی ریشہ دوانیوں یعنی گریٹ گیم کا شکار رہا ہے۔ مغلوں اور بعد میں برطانوی حکومت نے لداخ پر بر اہ راست علمداری کے بجائے اس کو ایک بفر علاقہ کے طور پر استعمال کیا۔

AKI 23 June 2020.00_11_04_04.Still002

چین پر منموہن سنگھ نے مودی کو یاد دلایا راج دھرم

ویڈیو: ہندوستان-چین سرحدپرکشیدگی کے مدنظر19 جون کوکل جماعتی اجلاس میں وزیر اعظم نریندر مودی کے بیان پر ہوئے تنازعہ کے بعد سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ نے کہا کہ قومی سلامتی، حکمت عملی اور سرحدوں کے مدعے پر انہیں سوچ سمجھ کر بولنا چاہیے۔ اس موضوع دی وائر کی سینئر ایڈیٹر عارفہ خانم شیروانی کا نظریہ

AKI 23 June 2020.00_12_06_22.Still004

میڈیا بول: چینی دراندازی کے بہانے کورونا کی ناکامی پر پردہ ڈالتے چینل

ویڈیو: پچھلے کئی دنوں سے ہندوستان-چین سرحد پر جاری کشیدگی کی وجہ سے ملک میں کورونا وائرس سے ہو رہی اموات کو میڈیا اور سرکار نظر اندازکر رہی ہے۔ملک میں بڑھ رہی غریبی اور بےروزگاری پر نہ تو سرکار کی کوئی توجہ ہے اور نہ ہی میڈیا کی۔ اسی موضوع پر سینئر صحافی ارملیش کا نظریہ۔

لداخ کے پاس بالٹال میں ایک عارضی  کیمپ کے پاس موجودہندوستانی فوج۔ (فوٹو: رائٹرس)

سال 2016 سے 2018 کے بیچ چینی فوج نے 1025 بار سرحد پردر اندازی کی: حکومت

لداخ کی گلوان گھاٹی میں ہندوستان اور چین کے جوانوں کے بیچ پرتشدد جھڑپ میں 20 ہندوستانی جوانوں کی ہلاکت کے بعد دونوں ممالک کے مابین رشتوں میں تلخی آگئی ہے۔ وہیں ہندوستان میں اس کو لےکر سیاسی بیان بازی بھی تیز ہو گئی ہے۔

سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ۔ (فوٹو: پی ٹی آئی)

وزیر اعظم کو اپنے کہے گئے لفظوں کے اثرات کے تئیں محتاط ہونا چاہیے: منموہن سنگھ

لداخ میں چینی فوج کے ساتھ پرتشدد جھڑپ میں ہلاک ہوئے 20 ہندوستانی جوانوں کے بارے میں جاری ایک بیان میں سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ نے کہا ہے کہ آج ہم تاریخ کے ایک نازک موڑ پر کھڑے ہیں۔ ہماری حکومت کے فیصلے اور اس کے ذریعے اٹھائے گئے قدم طے کریں گے کہ آنےوالی نسلیں ہمارا تجزیہ کیسے کریں گی۔

(علامتی تصویر، فوٹو: رائٹرس)

ہند-چین سرحدی تنازعہ: قابل اعتراض تبصرہ کے الزام میں کانگریس رہنما کے خلاف سیڈیشن کا معاملہ درج

ایک کانگریس رہنماکے خلاف ہندوستانی اور چینی فوجیوں کے پرتشدد جھڑپ اور وزیر اعظم نریندر مودی کے بارے میں قابل اعتراض تبصرہ کرنے کے الزام میں کیس درج کیا گیا تھا۔

سابق وزیر اعظم ایچ ڈی دیوگوڑا۔ (فوٹو: پی ٹی آئی)

چین کے معاملے پر ’راشٹر وادی بیان بازی‘ کو کم کیا جانا چاہیے: ایچ ڈی دیو گوڑا

سابق وزیر اعظم ایچ ڈی دیو گوڑا نے ہندوستان اورچین کے مابین جاری تعطل کو لےکر دیے جا رہے بیانات پر کہا کہ یہ وقت اشتعال انگیز زبان اور انتقام کا نہیں ہے۔ نامناسب بیان بازی سے ہندوستانی فوج اور سفارتی عملےکو خطرہ لاحق ہوگا۔

AKI 19 June 2020.00_37_45_06.Still001

کیا ہندوستان چینی سامان کا بائیکاٹ کر پائے گا؟

ویڈیو: ہندوستان اور چین کےمابین سرحدی تنازعہ کے بعد کنفیڈریشن آف آل انڈیا ٹریڈرس ( سی اے آئی ٹی)نے چینی سامانوں کے بائیکاٹ اور ملکی سامان کے استعمال کو فروغ دینے کی اپنی مہم‘بھارتیہ سامان ہمارا ابھیمان’ کے تحت کموڈیٹی کی 450 سےزیادہ کی فہرست جاری کی۔ اس مسئلے پر عارفہ خانم شیروانی کا نظریہ۔

نئی دہلی میں ویڈیو کانفرنسنگ کےذریعے ہندوستان- چین سرحدی تنازعے پر کل جماعتی اجلاس  کے دوران وزیر اعظم  نریندر مودی۔ (فوٹو: پی ٹی آئی)

’اگر چین نے ہندوستانی حدود میں در اندازی نہیں کی ہے، تو اس پر اتنی بحث کیوں ہو رہی ہے‘

ہندوستان- چین سرحد پر 20 ہندوستانی فوجیوں کی ہلاکت کے بعد وزیر اعظم نریندر مودی نے جمعہ کو کل جماعتی اجلاس میں کہا کہ ہندوستانی سرحد میں نہ کوئی داخل ہواتھا نہ کسی پوسٹ کو قبضے میں لیا گیا تھا۔ ان کے بیان پر اپوزیشن نے سوالات اٹھائے ہیں۔

(فوٹو: رائٹرس)

گلوان گھاٹی جھڑپ کے بعد چین نے حراست میں لیے گئے 10ہندوستانی فوجیوں کو رہا کیا: رپورٹ

لداخ میں ہندوستان-چین سرحد پر ہوئی پرتشدد جھڑپ کے بعد چین کے ذریعے کچھ ہندوستانی فوجیوں کو قیدی بنانے کی بات سامنے آئی تھی، لیکن فوج نے کسی بھی فوجی کے لاپتہ ہونے سے انکار کیا تھا۔دی ہندو کی رپورٹ کے مطابق چین نے جمعرات شام کو ایک لیفٹننٹ کرنل اور تین میجر سمیت 10 فوجیوں کو رہا کیا ہے۔

AKI.00_34_06_22.Still005

کمانڈروں کو نہیں، چین سے پی ایم مودی کو بات کرنی چاہیے

ویڈیو: ہندوستان اور چین کے بیچ آخر لداخ بارڈر پر کیا چل رہا ہے؟ کیا بات چیت سے اس مسئلے کاحل نکل پائےگا۔ اس مدعے پر سابق وزیر خارجہ اور کانگریس کے سینئر رہنما سلمان خورشید سے دی وائر کی سینئر ایڈیٹر عارفہ خانم شیروانی کی بات چیت۔

WhatsApp Image 2020-06-17 at 8.10.31 PM (1)

ہندوستان کی گلوان گھاٹی پر چین کا قبضہ: کیا ہو ہندوستان کا جواب؟

ویڈیو: ہندوستانی فوج نے کہا ہے کہ گزشتہ 15 جون کی رات کو گلوان علاقے میں چینی فوج کے ساتھ پرتشددجھڑپ میں 20 ہندوستانی فوج ہلاک ہو گئے۔ اس مدعے پر راجیہ سبھا ایم پی منوج جھا اور کانگریس ترجمان پروفیسر گورو ولبھ سے عارفہ خانم شیروانی کی بات چیت۔

پرتیک ہجیلا۔ (فوٹو بہ شکریہ: فیس بک)

مدھیہ پردیش: وزیر اعلیٰ شیو راج چوہان نے پرتیک ہجیلا کو ہیلتھ چیف کے عہدے سے ہٹایا

بدھ کو ایک میٹنگ میں کورونا وائرس کا جائزہ لیتے ہوئےوزیراعلیٰ شیوراج چوہان نے ہیلتھ چیف پرتیک ہجیلا کو ہٹانے کی ہدایت دی۔ گزشتہ سال اکتوبر میں سپریم کورٹ نے ہجیلا کے مدھیہ پردیش ٹرانسفر کئے جانے سےمتعلق حکم جاری کیا تھا۔

فوٹو : پی ٹی آئی

آسام این آر سی کی فہرست میں ’نااہل‘ لوگ شامل، ان کی پہچان کریں حکام: این آر سی کنوینر

آسام این آر سی کی حتمی فہرست کے شائع ہونے کے لگ بھگ چھ مہینے بعد ریاست کے این آر سی کنوینر ہتیش دیو شرما نے ریاست کے سبھی 33 اضلاع کے حکام سے اس لسٹ میں شامل ہو گئے ‘نااہل ’ لوگوں کے ناموں کی جانچ کرکے اس کی جانکاری دینے کو کہا ہے۔

فوٹو: پی ٹی آئی

آسام: ویب سائٹ سے این آر سی ڈیٹا غائب، وزارت داخلہ نے کہا-تکنیکی خرابی ہے

این آر سی کے اسٹیٹ کنوینر ہتیش دیو شرما نے بتایا کہ بڑے پیمانے پر ڈیٹا سیو کرنے کے لیے آئی ٹی کمپنی وپرو نے کلاؤڈ سروس مہیا کرائی تھی، جس سے کانٹریکٹ ریونیو نہ ہو پانے کی وجہ سے این آرسی کا ڈیٹا آف لائن ہو گیا ہے۔

(فائل فوٹو : رائٹرس)

میزورم سے نقل مکانی کر نے والے ’برو‘ آدیواسی تریپورہ میں ہوں گے آباد، معاہدہ پر ہوادستخط

سال 1997 میں ہوئے فرقہ وارانہ تشدد کے دوران بروکمیونٹی کے تقریباً37 ہزار لوگ میزورم چھوڑ‌کر تریپورہ کے مامت، کولاسب اورلنگلیئی ضلعوں میں بس گئے تھے۔ ان کو واپس بھیجنے کے سلسلے میں گزشتہ سال مرکز نےتریپورہ کے برو پناہ گزین کیمپ میں دیے جانے والے مفت راشن کے سسٹم کو روک دیاتھا، جس کے بعد کافی احتجاج ہوا تھا۔

آسام میں ایک فارین ٹریبونل کا دفتر (فوٹو : حسن احمد مدنی)

آسام میں ٹریبونل  نے 1.29 لاکھ لوگوں کو غیر ملکی قرار دیا: وزارت داخلہ

ریاست کے وزیر داخلہ نتیانند رائے نے لوک سبھا میں بتایا کہ آسام میں 290 خواتین کو غیر ملکی قرار دیا گیا ہے۔ وہیں، 181 غیر ملکی قرار دیے گئے اور 44 سزا یافتہ غیر ملکی نے آسام میں نظربندی میں تین سال سے زیادہ وقت پورا کر لیا ہے۔

ہمنتا بسواشرما(فوٹو بشکریہ :فیس بک)

آسام حکومت این آر سی کی حتمی فہرست سے باہر ہوئے ہندو بنگالیوں کی تعداد عام کرے گی: ہمنتا

وزیر داخلہ امت شاہ نے 20 نومبر کو راجہز سبھا مںر اعلان کای تھا کہ آسام مں این آر سی اپڈیٹ کرنے کی کارروائی ہندوستان کے باقی حصے کے ساتھ نئے سرے سے چلائی جائے‌گی، جس کے بعد آسام حکومت میں وزیر خزانہ ہمنتا بسوا شرما نے بتایا تھا کہ ریاستی حکومت نے مرکزی وزیر داخلہ سے این آر سی کی موجود ہ صورت کو خارج کرنے کی اپیل کی ہے۔

پارلیامنٹ میں مظاہرہ کرتے پی ڈی پی کے راجیہ سبھا ممبر میر فیاض اور نذیر احمد لوائے (فوٹو : پی ٹی آئی)

سرمائی اجلاس کے پہلے دن پی ڈی پی رکن پارلیامان کا مظاہرہ

پارلیامنٹ کے سرمائی اجلاس کے پہلے دن پی ڈی پی کے راجیہ سبھا ممبروں نے کشمیر میں صورت حال معمول پر لانے کی مانگ کرتے ہوئے خصوصی درجہ ختم کئے جانے کی مخالفت کی۔ پی ڈی پی چیف محبوبہ مفتی 5 اگست سے نظربند ہیں۔

سجاد لون ، شاہ فیصل  اور وحید پارہ ، فوٹو: پی ٹی آئی/وکی پیڈیا

پی ڈی پی کا الزام-نئی جگہ شفٹ کرنے کے دوران حراست میں لیے گئے کشمیر ی رہنما لون اور فیصل کے ساتھ بدسلوکی کی گئی

پی ڈی پی چیف نے الزام لگایا ہے کہ پولیس نے سجاد لون، پی ڈی پی رہنما وحید پارہ اور سابق آئی اے ایس افسر شاہ فیصل کو سرکاری ٹھکانوں میں شفٹ کرنے کے دورا ن ان سے بدسلوکی کی۔ انہوں نے اپنے ٹوئٹ میں کہا ہےکہ سجاد لون کو ڈرایا دھمکایا گیا اور انہیں برہنہ ہونے کے لیے کہا گیا۔

پرتیک ہجیلا (فوٹو بہ شکریہ : نارتھ ایسٹ ٹوڈے)

سپریم کورٹ نے دیا این آر سی کوآرڈینٹر پرتیک ہجیلا کے فوری تبادلے کا حکم

چیف جسٹس رنجن گگوئی، جسٹس ایس اے بوبڈے اور جسٹس آر ایف نریمن کی بنچ کے ذریعے جاری حکم میں فوری اثر سے پرتیک ہجیلا کا تبادلہ مدھیہ پردیش کرنے کو کہا گیا ہے، لیکن اس کی وجہ نہیں بتائی گئی ہے۔

Don`t copy text!