Liquor Mafia

سبھاش کمار مہتو۔ (تصویر: اسپیشل ارینجمنٹ)

بہار: ریت اور شراب مافیا کے بارے میں رپورٹنگ کرنے والے صحافی کا قتل

یہ واقعہ بیگوسرائے ضلع کے بکھری تھانہ حلقے کا ہے، جہاں 20 مئی کی رات کو ایک شادی کی تقریب سے لوٹ رہے 26 سالہ صحافی سبھاش کمار مہتو کو گولی مار دی گئی ۔ اہل خانہ اور دوستوں کا کہنا ہے کہ اس کی وجہ شراب اور ریت مافیا کے سلسلے میں کی جانے والی رپورٹنگ ہے۔ حالاں کہ، پولیس نے اس کی تردید کی ہے۔

(السٹریشن: دی وائر)

ملک میں آر ٹی آئی کارکنوں پر بڑھتے ہوئے حملوں کے بیچ احتسابی قانون کی ضرورت

گزشتہ21 دسمبر کو کسان اور آر ٹی آئی کارکن امرارام گودارا کو باڑمیر سے اغوا کیا گیا اور بے رحمی سے پیٹنے کے بعدقریب قریب موت کے گھاٹ اتار کران کے گھر کےپاس پھینک دیا گیا۔ لگاتارآر ٹی آئی اور انسانی حقوق کے کارکنوں پر بڑھتے ہوئے حملے احتسابی قانون سازی کی ضرورت کو نشان زدکرتےہیں۔

(علامتی تصویر، فوٹو: پی ٹی آئی)

راجستھان: آر ٹی آئی کارکن پر نامعلوم بدمعاشوں نے حملہ کیا، پاؤں میں کیل ٹھونکی

راجستھان کے باڑمیر ضلع کے ایک آر ٹی آئی کارکن پر ان کے آبائی گاؤں میں حملہ کیا گیا،ان کی حالت تشویشناک ہے۔انہوں نےکچھ عرصہ پہلے محکمہ پنچایتی راج میں گڑبڑی اور غیر قانونی شراب مافیاؤں کی شکایت کرتے ہوئے کارروائی کا مطالبہ کیا تھا۔

علامتی تصویر،فوٹو: پی ٹی آئی

بہار: غیر قانونی شراب کے کاروبار میں پولیس کی شمولیت کو لے کر خط لکھنے والے ایس پی کا تبادلہ

گزشتہ چھ جنوری کو پروہیبیشن ڈویژن کے ایس پی راکیش کمار سنہا نے ایک خط میں کہا تھا کہ بھلے ہی سرکار نے شراب بندی نافذ کی ہو، لیکن محکمہ ایکسائزکے ملازمین کے تعاون سے تمام تھانہ حلقوں میں شراب کی فروخت دھڑلے سے ہو رہی ہے۔ سنہا نے تمام ا ضلاع کے ایس پی سے اس پرفوراً کارروائی کی اپیل بھی کی تھی۔

Don`t copy text!