سی بی آ ئی

امت شاہ اور سہراب الدین شیخ (فوٹو : رائٹرس)

 سہراب الدین فرضی انکاؤنٹر سے امت شاہ کو سیاسی اور اقتصادی فائدہ ہوا: سابق انکوائری آفیسر

سہراب الدین فرضی انکاؤنٹر معاملے میں سابق چیف انکوائری آفیسر امیتابھ ٹھاکر نے بتایا کہ امت شاہ کو اس معاملے میں 70 لاکھ کی ادائیگی کی گئی تھی۔ سابق آئی پی ایس افسر ڈی جی ونجارہ، سابق ایس پی (ادئےپور) دنیش ایم این، سابق ایس پی (احمد آباد) راج کمار پانڈین اور سابق ڈی سی پی (احمد آباد) ابھئے چوڑاسما کو بھی فائدہ ہوا تھا۔

اعظم خان

ہرین پانڈیا اور سہراب الدین انکاؤنٹر تک کے راز جاننے والے اعظم خان کو کون مارنا چاہتا ہے؟

وائر کی خصوصی رپورٹ: ایک کلیدی گواہ کے طور پر اعظم خان گجرات کے سابق وزیر داخلہ اور بی جے پی رہنما ہرین پانڈیا کے قتل سے لےکر سہراب الدین شیخ کے انکاؤنٹر سے جڑے کئی راز جانتے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ ان کو اپنی جان کا خطرہ نظر آ رہا ہے۔

سہراب الدین شیخ اور کوثر بی

سہراب الدین کے بھائی نے کہا، پر جا پتی نے مجھے اس کے فرضی انکاؤنٹر کے بارے میں بتایا تھا

سہراب الدین شیخ کے بھائی رباب الدین نے عدالت کو بتایا کہ تلسی رام پرجاپتی نے اس کو بتایا تھا کہ اس کے بھائی کو فرضی انکاؤنٹر میں مارا گیاہے ۔ سہراب الدین کے ساتھی پر جاپتی کی بھی 2006میں ایک مبینہ فرضی انکاؤنٹر میں موت ہوئی تھی ۔

Haren-Pandya-1200x581

ویڈیو: 15سال پہلے کس نے مودی کے سیاسی مخالف ہرین پانڈیاکا قتل کیا؟

15 سال پہلے گجرات میں بی جے پی کے رہنما ہرین پانڈیا کو کس نے مارا، یہ سوال پھر سامنے آ گیا ہے۔ سہراب الدین شیخ معاملے میں گواہ اعظم خان نے کہا ہے کہ سہراب الدین کو نریندر مودی کے سیاسی مخالف ہرین پانڈیا کے قتل کی سپاری دی گئی تھی۔

Amit-Shah-sihrabuddin-encounter-VLSolanki

سہراب الدین انکاؤنٹر معاملے کا انکشاف کرنے والے انسپکٹر کا الزام؛ مجھے چپ کرانے کی کوشش کی جارہی ہے

سہراب الدین شیخ معاملے کی جانچ کے بعد اس کو فرضی بتانے والے گجرات پولیس انسپکٹر وی ایل سولنکی نے دی وائر کو بتا یا کہ حکومت ہر وہ طریقہ استعمال کر چکی ہے جس سے میں کورٹ تک نہ پہنچ سکوں ۔

فوٹو: پی ٹی آئی

2جی کیس: سات سال میں کوئی ثبوت پیش نہیں کیاگیا:سی بی آ ئی جج

خصوصی جج نےاپنے 1552 صفحات پر مشتمل فیصلہ میں کہا کہ ’’میں یہ بھی جوڑنا چاہتاہوں کہ تقریبا گزشتہ سات سال میں ،گرمیوں کی چھٹیوں سمیت کام کاج کے سبھی دنوں میں پوری  مستعدی سے صبح 10بجے سے شام 5بجے تک کھلی عدالت میں اس انتظار میں بیٹھارہا […]