نکسلی حملہ

(فوٹو بہ شکریہ: ٹوئٹر/Photo: @ChhattisgarhCMO)

افسروں کی نااہلی اور جھوٹی انا چھتیس گڑھ میں جوانوں کی شہادت کے لیے ذمہ دار ہے

نکسل مسئلہ صرف ‘پولیس کا مسئلہ’ نہیں ہے جو محض طاقت کے استعمال سےحل ہو جائے اس کےبہت سے پیچیدہ پہلو ہیں۔حکومت کو اپنی جھوٹی اناترک کرکے ان پہلوؤں کو بھی ایڈریس کرنا چاہیے۔

فوٹو: پی ٹی آئی

کیا چھتیس گڑھ کے حالیہ نکسلی حملے میں حکومت کے لیے کوئی پیغام تھا…

حقوق انسانی کے لئے سرگرم تنظیم پی یو سی ایل کا کہنا ہے کہ جب تک سماجی عدم مساوات کا خاتمہ نہیں ہوگا نکسلی تحریک کو پھلنے پھولنے کا موقع ملتا رہے گا۔کیونکہ عدم تحفظ کا احساس ہی لوگوں کو بائیں بازو کی انتہا پسند تنظیموں میں شامل ہونے کی ترغیب دیتا ہے۔

(فوٹو بہ شکریہ : اے این آئی)

اڑیسہ: کندھمال ضلع‎ میں نکسلیوں نے خاتون الیکشن افسر کو گولی مار‌ی

پولیس کے مطابق، ماؤوادیوں نے اڑیسہ کے کندھمال ضلع‎ کے لوگوں سے ووٹنگ کا بائیکاٹ کرنے کو کہا تھا۔ ضلع‎ کے فرنگیا پولیس تھانہ حلقہ کے ایک دوسرے گاؤں میں ماؤوادیوں نے الیکشن افسروں کو پولنگ بوتھ لے جا رہی گاڑی میں آگ لگا دی۔

Don`t copy text!