Andhra Pradesh

چندر بابو نائیڈو اور وزیر اعظم مودی۔ (تصویر بہ شکریہ: X/@ncbn)

آندھرا پردیش کو خصوصی ریاست کے درجہ سے زیادہ کی ضرورت: چیف منسٹر چندر بابو نائیڈو

مودی حکومت کی جانب سے آندھرا پردیش کو خصوصی ریاست کا درجہ دینے سے انکار کے بعد ٹی ڈی پی 2018 میں این ڈی اے سے باہر ہو گئی تھی۔ لیکن 2024 کے لوک سبھا انتخابات سے ٹھیک پہلے پارٹی این ڈی اے میں لوٹ آئی۔ اب پارٹی سپریمو اور چیف منسٹر چندربابو نائیڈو نے کہا ہے کہ ریاست کو خصوصی درجے سے کہیں زیادہ کی ضرورت ہے۔

مودی اور شاہ، پس منظر میں مراٹھا ریزرویشن تحریک اور لاسلگاؤں منڈی کی تصویریں۔

مہاراشٹر میں کیوں ماند پڑ گئی مودی-شاہ برانڈ کی سیاست

پورے ہندوستان سےموصول ہونے والی خبریں بتا رہی ہیں کہ 2014 اور 2019 کا ‘مودی میجک’ اس بار ندارد ہے کیونکہ انتخابات لوک سبھا حلقہ اور ریاستی سطح پر لڑے گئے ہیں، جہاں بے روزگاری، مہنگائی اور دیہی بحران پورے ہندوستان میں یکساں اور بنیادی ایشو ہیں۔

PTI9_1_2018_000073B

کیا مودی جنوبی ہندوستان کو فتح کر پائیں گے؟

جنوبی ہندوستان کو فتح کرنے کے لیے ان دنوں مودی مسلسل ان صوبوں کے دورے کر رہے ہیں۔ اس کی سب سے بڑی وجہ ہے کہ وہ صرف شمالی ہندوستان کا لیڈر ہونے کا دھبہ مٹا کر ملک گیر لیڈر کے بطور اپنے آپ کو پیش کرنا چاہتے ہیں۔ وہ جانتے ہیں کہ جنوبی ہندوستان کو فتح کیے بغیر وہ ہندوستان کے پہلے وزیر اعظم جواہر لال نہرو کی وراثت کو تاریخ کے صفحات سے مٹا نہیں سکتے ہیں یا اپنے آپ کو نہرو ثانی کے بطور پیش نہیں کرسکتے ہیں۔

لکھنؤ یونیورسٹی میں تنازعہ کے دوران (سرخ دائرے میں) پروفیسر روی کانت چندن۔ (تصویر بہ شکریہ: Twitter/@Akshay_Svar)

دیوتاؤں کی توہین کے الزام میں لکھنؤ یونیورسٹی کے پروفیسر کے ساتھ اے بی وی پی  نے بدسلوکی کی

ایک آن لائن مباحثہ کے دوران لکھنؤ یونیورسٹی میں ہندی کے پروفیسر روی کانت چندن نے کاشی وشوناتھ مندر-گیان واپی مسجد تنازعہ پر ایک کتاب کا حوالہ دیا تھا، جس میں ان مبینہ حالات کو بیان کیا گیا ہے جن کے تحت متنازعہ مقام پر مندر کو منہدم کرکے مسجد بنائی گئی تھی۔ اس سلسلے میں پولیس نے پروفیسر کے خلاف ایف آئی آر درج کی ہے۔

گونٹور میں جناح ٹاور (تصویر بہ شکریہ: ٹوئٹر/@SVishnuReddy)

آندھرا پردیش: بی جے پی کے نام تبدیل کرنے کے مطالبے کے بعد جناح ٹاور کو ترنگے کے رنگوں میں پینٹ کیا گیا

آندھرا پردیش کے گونٹور ضلع کے معروف جناح ٹاور پر26 جنوری کو ترنگا لہرانے کی کوشش کے دوران دائیں بازو کے گروپ ‘ہندو واہنی’ کے تین ارکان کو حراست میں لیے جانے کے بعد تنازعہ کھڑا ہو گیاتھا۔ گزشتہ سال دسمبر میں بی جے پی نے مطالبہ کیا تھا کہ اس ٹاور کا نام سابق صدرعبدالکلام کےنام پررکھا جائے۔ انہوں نے دھمکی دی کہ اگر وائی ایس آر کانگریس حکومت نے ان کے مطالبات پر توجہ نہیں دی تو وہ اس یادگار کو مسمار کردیں گے۔

(فوٹو: رائٹرس)

ملک  کے 42 ہزار سرکاری اسکولوں میں پینے کے لیے پانی نہیں، 15 ہزار میں ٹوائلٹ نہیں: مرکز

وزیر تعلیم رمیش پوکھریال نے یو ڈی آئی ایس ای کےاعدادوشمار کے حوالے سے ایوان میں بتایا کہ جن 42074 اسکولوں میں پانی پینے کی سہولت نہیں ہےان میں سب سے زیادہ 8522 آسام میں ہیں۔ لڑکے اور لڑکیوں کے لیے الگ ٹوائلٹ نہ ہونے کے معاملے میں بھی آسام پہلے نمبر پر ہے۔

چھہ دسمبر کومغربی گوداوری ضلع کے ایلورو شہر میں ایک خاتون  کو اچانک مرگی کا دورہ آنے کے بعد اسپتال لے جاتے اہل خانہ۔ (فوٹو: پی ٹی آئی)

آندھرا پردیش: پراسرار بیماری سےچار سو سے زیادہ افراد متاثر، مرکز نے جانچ کے لیے ماہرین کی ٹیم بھیجی

آندھراپردیش کے ایلورو شہر میں پراسرار بیماری سے 400 سے زیادہ افراد متاثر ہیں اور اب تک ایک شخص کی موت ہوئی ہے۔ لوگوں میں سردرد، مرگی کے دورے پڑنے، اچانک بے ہوش ہونے، کانپنے اور منھ سے جھاگ آنے کی شکایتیں آ رہی ہیں۔

جگن ریڈی، جسٹس این وی رمنا اور این چندر بابو نائیڈو۔ (فوٹو: پی ٹی آئی)

آندھرا پردیش: وزیر اعلیٰ نے سی جے آئی کو لکھا-سرکار گرانے کی سازش کر رہے ہیں سپریم کورٹ کے جج

وزیر اعلیٰ وائی ایس جگن موہن ریڈی نے سی جےآئی ایس اے بوبڈے کو لکھے خط میں سپریم کورٹ کے جسٹس این وی رمنا پر بدعنوانی اور ٹی ڈی پی رہنما چندر بابو نائیڈو کی جانب سے ان کی سرکار گرانے کی سازش کےالزام لگائے ہیں۔ جگن کا یہ بھی الزام ہے کہ جسٹس رمنا ریاست کی عدلیہ کو متاثر کر رہے ہیں۔

(فوٹو: پی ٹی آئی)

آندھرا پردیش: گیس لیک کے بعد وشاکھا پٹنم میں آٹھ کی موت، سینکڑوں ہاسپٹل میں بھرتی

یہ حادثہ وشاکھاپٹنم کے گوپال پٹنم علاقے میں واقع ایل جی پالیمر انڈسٹری کو دوبارہ کھولنے کے دوران ہوا۔ اس حادثے میں دو بزرگ اور ایک 8 سال کی بچی سمیت آٹھ لوگوں کی موت ہوئی ہے۔ وہیں، 5000 سے زیادہ لوگ بیمار ہو گئے ہیں جنہیں ہاسپٹل لے جایا جا رہا ہے۔

سپریم کورٹ (فوٹو : رائٹرس)

شہریت قانون کے مخالفین پر این ایس اے لگا نے کے خلاف وسیع حکم نہیں دے سکتے: سپریم کورٹ

سپریم کورٹ نے شہریت ترمیم قانون کو لےکر چل رہی مخالفت کے دوران ہی کچھ ریاستوں اور قومی راجدھانی میں این ایس اے لگانے کے فیصلےکو چیلنج دینے والی عرضی پر کہا کہ ہم متفق ہیں کہ این ایس اے کا غلط استعمال نہیں کیا جانا چاہیے لیکن سبھی کے لئے کوئی حکم نہیں دیا جا سکتا۔ اس سے انتشار پیداہو جائے گا۔

(علامتی تصویر: پی ٹی آئی)

دہلی میں تین مہینے کے لیے نیشنل سکیورٹی ایکٹ، پولیس کو ہوگا شک کی بنیاد پر حراست میں لینے کا اختیار

دہلی کے ایل جی انل بیجل کی ہدایت کے مطابق19 جنوری سے 18 اپریل 2020 تک دہلی پولیس کمشنر کو یہ اختیار ہے کہ وہ کسی بھی فرد جس کو وہ قومی سلامتی اور نظم ونسق کے لیے خطرہ مانتے ہیں،نیشنل سکیورٹی ایکٹ کے تحت حراست میں لے سکتے ہیں۔

فوٹو : پی ٹی آئی

الیکشن کمیشن نے کہا-الیکشن کے دوران غیر جانبداری سے کام لے وزارت خزانہ کی ایجنسیاں

الیکشن کمیشن نے وزارت خزانہ کو یہ مشورہ حال ہی میں مدھیہ پردیش، کرناٹک، آندھر پردیش اور تمل ناڈو میں سیاسی رہنماؤں یا ان سے جڑے لوگوں کے ٹھکانوں پر محکمہ ٹیکس کے مارے گئے چھاپوں کے حوالے سے دیاہے۔ کمیشن نے کہا کہ ایسی کارروائی کی جانکاری اس کے افسروں کے علم میں ہونی چاہیے۔

فوٹو: پی ٹی آئی

آندھر پردیش کے بعد مغربی بنگال نے بھی سی بی آئی کے داخلے پر روک لگائی

وزیر خزانہ ارون جیٹلی نے آندھر پردیش اور مغربی بنگال کی حکومتوں کے اس فیصلے کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ جن کے پاس چھپانے کو بہت کچھ ہے، وہی اپنی ریاست میں سی بی آئی کو نہیں آنے دے رہے۔

RahulGandhi_Modi

عدم اعتماد تجویز : راہل گاندھی نے کہا ،وزیر اعظم مجھ سے آنکھ نہیں ملا سکتے

مودی حکومت کے خلاف اپوزیشن کے پہلے عدم اعتماد تجویز پر لوک سبھا میں بحث جاری ہے۔ بحث کی شروعات ٹی ڈی پی کے جے دیو گلا نے کی۔ بی جے ڈی کے ممبر عدم اعتماد تجویز کی مخالفت کرتے ہوئے ایوان سے واک آؤٹ کر گئے۔ عدم اعتماد تجویز پر ووٹنگ کے دوران شیو سینا غیر حاضر رہی۔

اسٹیل پلانٹ،فوٹو: اے این آئی

آندھر پردیش : اسٹیل پلانٹ میں گیس لیک ہونے سے 6 لوگوں کی موت

اننت پور ضلع میں ہوئے حادثے میں 2مزدوروں کی حالت بے حد نازک ہے۔حادثے کے بعد لیفٹ اور وائی ایس آر کانگریس پارٹی کے کارکنوں نے اسٹیل پلانٹ کے سامنے احتجاج کیا اور متاثرین کے اہل خانہ کو 50 لاکھ روپے معاوضہ دینے کی مانگ کی۔

BJP-congress

کرناٹک اسمبلی انتخاب اب تک کا سب سے مہنگا انتخاب : سروے

سینٹر فار میڈیا اسٹڈیز کے سروے کے مطابق، سیاسی جماعتوں اور امیدواروں کے ذریعے اس اسمبلی انتخاب میں قریب 11 ہزار کروڑ روپے خرچ کئے گئے ہیں، جو پچھلے انتخابی خرچ کا دو گنا ہے۔ نئی دہلی: حال ہی میں ختم ہوا کرناٹک اسمبلی انتخاب سیاسی پارٹیوں اور […]