AMU

sir syed_amu

سر سید اپنا کام کر کے چلے گئے،اب ہمیں آج کے حالات کا مقابلہ کرنا ہے

سر سید اور ان کے عہد کے لوگوں کو جو کرنا تھا وہ کر کے چلے گئے۔ اب ہمیں آج کے حالات کا مقابلہ کرنا ہے۔ آج کا سب سے بڑا چیلنج اپنے اوپر چھا رہے مایوسی کے بادل کو چھانٹنا ہے اور اپنے لوگوں میں، خاص کر نئی نسل میں، عزم اور حوصلہ پیدا کرنا ہے۔

sir syed_amu

جب سرسید نےگھنگھرو باندھے

سر سید کو یہ طریقہ دیکھ کر خیال آیا کہ ایسی ہی منڈلی اور تھیئٹر مسلمانوں کے لیے بھی ہونا چاہیے۔ چند دن ہوئےکہ سر سید احمد خان کی دو صد سالہ سالگرہ کی تقریبات منعقد ہوئیں۔ اسی دوران ہندوستانی رائٹر رعنا صفوی نے دہلی میں سر سید […]

NajeebAMU

سر سید ڈے : اے ایم یو میں پرنب مکھرجی کے سامنے طلبا کا احتجاج ،پوچھا؛ کہا ں ہے نجیب؟

سر سید کے دو صد سالہ جشن میں سابق صدر پرنب مکھرجی کو پوسٹر دکھا  ےٴ۔ اور یہ اس وقت ہوا جب دہلی میں CBIکے ہیڈ کواٹر پر نجیب احمد کی ماں مختلف اداروں کے طلبہ-طالبات کے ساتھ احتجاج کر رہی ہیں ۔ علی گڑھ : علی گڑھ […]

SirSyedGhalib

جب سرسید نے غالب کی بات نہیں مانی تھی…

ہندوستان پر انگریزوں کا تسلط قائم ہونے کے بعد چندحساس، بیدار مغز دانشور و ں نے خود احتسابی  شروع کر دی تھی۔اس عمل میں اہم ترین سوال یہ تھا کہ ہندوستانی معاشرت میں ایسی کیا کمزوریاں تھیں کہ مغرب ان پر اپنا تسلط قائم کرنے میں کامیاب ہو […]

AMU_Clg

کیا ماڈرن ایجوکیشن کے پیروکار سر سید احمد خان عورتوں کی تعلیم کے خلاف تھے؟

سرسید کا ماننا تھا کہ جب مرد لائق ہوجاتے ہیں تب عورتیں بھی لائق ہوجاتی ہیں ۔جب تک مرد لائق نہ ہوں ، عورتیں بھی لائق نہیں ہوسکتیں ۔یہی سبب ہےکہ ہم کچھ عورتوں کی تعلیم کا خیال نہیں کرتے ہیں۔