فوٹو: ٹوئٹر

جھارکھنڈ: شہریت ترمیم قانون کے خلاف مظاہرہ کرنے والوں پر درج سیڈیشن کا معاملہ واپس

اس کے علاوہ ملزم افسروں کے خلاف کارروائی کی بھی سفارش کی گئی ہے۔ جھارکھنڈ کے وزیراعلیٰ ہیمنت سورین نے کہا،قانون عوام کو ڈرانے اور ان کی آواز دبانے کے لیے نہیں بلکہ عوام میں تحفظ کا احساس پیدا کرنے کے لیے ہوتا ہے۔

جج لویا

خاطر خواہ شواہد کے ساتھ شکایت ملے توحکومت  کرا سکتی ہے جج لو یا معاملے کی جانچ: مہاراشٹر وزیر

شیوسیناکی قیادت والی سرکار میں این سی پی کے وزیروں کی چار گھنٹے چلی میٹنگ کے بعد این سی پی ترجمان اور ریاست کے وزیرنواب ملک نے کہا کہ اگرخاطر خواہ شواہد کے ساتھ کوئی شکایت ملتی ہے تو سرکار جج بی ایچ لو یا معاملے کو پھر سے کھولنے پر غور کرےگی۔

نریندر مودی(فوٹو : پی ٹی آئی)

شہریت قانون کی مخالفت کے بیچ وزیراعظم نریندر مودی کا آسام دورہ رد

وزیراعظم نریندر مودی 10 جنوری کو گوہاٹی میں کھیلو انڈیا گیمس کا افتتاح کرنے والے تھے۔شہریت قانون کو لے کر مظاہرہ کر رہےآل آسام اسٹوڈنٹس یونین نے کہا تھا کہ اگر وزیراعظم اس پروگرام میں شامل ہوتے ہیں، تو ریاست میں بڑے پیمانے پر مظاہرے کیے جائیں گے۔

فوٹو: پی ٹی آئی

اے ایم یو میں پولیس کارروائی پر الہ آباد ہائی کورٹ سخت، این ایچ آر سی کو جانچ کی ہدایت

اترپردیش کے علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں گزشتہ 15 دسمبر کو شہریت قانون اور نئی دہلی میں جامعہ کے طلبا پر پولیس کی بربریت کے خلاف ہو رہا مظاہرہ پر تشدد ہو گیا تھا،جس میں 100 لوگ زخمی ہو گئے تھے۔

 سینٹرل انفارمیشن کمیشن

چندہ دینے والوں کی شناخت مخفی رکھنے کی مانگ کر نے والوں کے نام بتائے مرکز: سی آئی سی

اس کو لےکر دائر کی گئی آر ٹی آئی پر صحیح سے کارروائی نہیں کرنے کو لےکر سی آئی سی نے مرکزی وزارت خزانہ کے محکمہ مالیاتی امور، محکمہ معاشی امور اور محکمہ ریونیو اور الیکشن کمیشن کو وجہ بتاؤ نوٹس جاری کیا ہے۔

HBB 7 Jan 2020.00_30_18_22.Still002

جے این یو کے گنہ گاروں کو کب پکڑے گی پولیس؟

ویڈیو: جے این یو میں اتوار کی شام کو ہوئے تشدد میں سابرمتی ہاسٹل کے طلبہ و طالبات سمیت کئی اسٹوڈنٹس زخمی ہوئے ہیں۔ حملے میں کئی اساتزہ کو بھی چوٹیں آئی ہیں۔ اس مدعے پر دی وائر کی سینئر ایڈیٹر عارفہ خانم شیروانی نے جے این یو جاکر طلبا سے بات کی۔

دیپیکا پڈوکون، فوٹو: سوشل میڈیا

بی جے پی ایم پی نے کہا-دیپیکا کی فلم ’چھپاک‘ کا کریں بائیکاٹ، جے این یو میں کی ’ٹکڑے ٹکڑے گینگ‘ کی حمایت

دیپیکا نے سوموار کو کہا تھا کہ ،یہ دیکھ کر مجھے فخر ہوتا ہے کہ ہم اپنی بات کہنے سے ڈرے نہیں ہیں… چاہے ہماری سوچ کچھ بھی ہو، لیکن میرے خیال سے ہم ملک اور اس کے مستقبل کے بارے میں سوچ رہے ہیں، یہ اچھی بات ہے۔

(فوٹو : رائٹرس)

ایران نے عراق میں امریکی فورسز پر کئی میزائل داغے، ٹرمپ نے کہا ’سب ٹھیک ہے‘

ایران نے یہ کارروائی عراق میں امریکی ہوائی حملے میں اپنے فوجی کمانڈر قاسم سلیمانی کے مارے جانے کے بعد کی ہے۔ میزائل حملے کے بعد ٹرمپ نے ٹوئٹ میں کہا کہ عراق میں دو فوجی اڈے پر ایران نے میزائل داغے۔ اس سے ہونے والے نقصانات اور ہلاکتوں کے بارے میں معلومات جمع کی جارہی ہے۔ اب تک سب ٹھیک ہے۔

فوٹو: رائٹڑس

سرکاری اعداد و شمار میں تصدیق، 2019-20 میں جی ڈی پی شرح نمو پانچ فیصدی رہنے کا امکان

سی ایس او نے منگل کوقومی آمدنی کا پہلا اندازہ جاری کیا ہے۔ اس میں کہا گیا ہے کہ اقتصادی شرح نمو میں گراوٹ کی اہم وجہ مینو فیکچرنگ کی شرح نمو کا گھٹنا ہے۔مالی سال2018-19 میں اقتصادی شرح نمو6.8 فیصدی رہی تھی۔

فوٹو: رائٹرس

جے این یو تشدد: 2.30 سے 6 بچے کے بیچ 23 پی سی آر کال کے گھنٹوں بعد پہنچی پولیس

ذرائع نے کہا کہ رپورٹ میں صبح 8 بجے جے این یو ایڈمنسٹریٹو بلاک میں خاتون پولیس اہلکاروں کے ساتھ کل 27 پولیس اہلکاروں کے سادے کپڑوں میں ڈیوٹی پر تعینات ہونے اور رات کی شفٹ کے بعد ہٹنے تک کے واقعات کا ذکر ہے۔دہلی پولیس کمشنر امولیہ پٹنایک کو سونپی گئی یہ رپورٹ ممکن ہے مرکزی وزیر داخلہ کو بھیجی جائےگی۔

وزیر اعظم مودی کے ساتھ جنرل بپن راوت ، فوٹو: پی ٹی آئی

ہندوستان: پہلے کمانڈر ان چیف کی تقرری اور خدشات

کئی تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ سی ڈی ایس کی تقرری تو ہوئی ہے، مگر اس عہدے کے پر کترے گئے ہیں۔ اس پوسٹ پر کسی پانچ ستارہ جنرل کے بجائے چار ستارہ جنرل کو ہی بٹھایا گیا ہے اور اس کی تنخواہ و مراعات بھی تین سروس سربراہان کے برابر ہوں گی۔ ایک طرح سے وہ چیف آف اسٹاف کمیٹی کا مستقل چیئرمین ہوگا۔ مگر دیگر افراد کا کہنا ہے کہ یہ ایک شروعات ہے اور سروسز کو اس کا خیر مقدم کرنا چاہیے۔

دہلی کے لاجپت نگر میں ریلی کے دوران امت شاہ، فوٹو: ٹوئٹر

دہلی: امت شاہ کے سامنے شہریت قانون کے احتجاج میں بینر دکھانے والی خاتون کو گھر سے نکالا

دہلی کے لاجپت نگر میں مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کی ریلی کے دوران دوعورتوں نے اپنے فلیٹ کی بالکنی سے ایک بینر لہرایا، جس پر، شیم، سی اے اے، این آر سی، جئے ہند، آزادی اور ناٹ ان مائی نیم لکھا تھا۔

فوٹو: ٹوئٹر

ممبئی: ’فری کشمیر‘ کا پلے کارڈ لے کر مظاہرہ کرنے پر خاتون کے خلاف معاملہ درج

ممبئی کی کولابہ پولیس نے فسادات بھڑکانے کے الزام میں فنکار مہک مرزا پربھو کے خلاف معاملہ درج کیا ہے۔ مہک ممبئی کے گیٹ وے آف انڈیا پر گزشتہ سوموار کی رات شہریت قانون کی مخالفت میں مظاہرے میں شامل ہوئی تھیں۔

شہریت قانون پر بنگال بی جےپی کی کتاب، فوٹو: پی ٹی آئی

مودی کے دعوے کے برعکس بنگال بی جے پی نے ایک کتابچہ میں سی اے اے کے بعد این آر سی نافذ کر نے کی بات کہی

بی جےپی کی بنگال اکائی کے جنرل سکریٹری باسو نے کہا کہ بنگالی میں جاری اس کتاب میں پوری طرح سے ہندی کاترجمہ نہیں کیا گیا ہے۔ ادھر بنگال میں سی اے اے اور این آر سی کو لےکر بہت بھرم پیدا ہو گیا ہے۔ اس لیے، این آر سی کے پہلو کو کتاب کے بنگالی ایڈیشن میں شامل کیا گیا ہے اور وہاں لکھا گیا ہے کہ این آر سی کی کارروائی مرکزی حکومت کا خصوصی اختیار ہے۔

کانگریس رہنما کرن سنگھ(فوٹو : پی ٹی آئی)

جے این یو تشدد پر سابق چانسلر نے کہا-موجودہ وائس چانسلر پوری طرح ناکام رہے ہیں

جواہرلال نہرو یونیورسٹی کے سابق چانسلر اور سینئر کانگریس رہنما کرن سنگھ نے جے این یو میں ہوئے حملے پر وائس چانسلر جگدیش کمارکی تنقید کو نشانہ بنایا اور الزام لگایا کہ ایسے مشکل وقت میں وہ غیر حاضر تھے، ان کو سامنے آکر مسئلہ کو سلجھانا چاہیے۔

سابق آئی پی ایس ایس آر داراپوری اور سماجی کارکن صدف جعفر(فوٹو بہ شکریہ: فیس بک)

شہریت قانون: رہائی کے بعد بو لے ایس آر داراپوری-پولیس نے حراست میں نہیں دیا کھانا اور کمبل

لکھنؤ میں شہریت قانون کی مخالفت کو لےکر گرفتار سماجی کارکن صدف جعفر اور سابق آئی پی ایس افسر ایس آر داراپوری کو منگل کو جیل سے رہا کردیا گیا۔صدف کا الزام ہے کہ ان کو بنا کسی خاتون کانسٹبل کےحراست میں لیا گیااور بے رحمی سے پیٹا گیا۔

14 اگست، 2019 کو سرینگر میں ہوئے ایک مظاہرہ کے بعد(فوٹو : رائٹرس)

جموں و کشمیر میں 2017 اور 2018 کے مقابلے 2019 میں پتھربازی کے واقعات میں اضافہ، 1996 معاملے درج: آر ٹی آئی

جموں و کشمیر میں 2018 میں پتھر پھینکنے کے 1458 اور 2017 میں 1412 واقعات درج کئے گئے۔ گزشتہ سال پانچ اگست کو خصوصی ریاست کا درجہ ہٹانے کے بعد سے یہاں 1193 واقعات درج کئے گئے ہیں۔ اگست 2019 میں ریاست میں پتھربازی کے کل 658 واقعات سامنے آئے، جبکہ اس سے پہلے جولائی میں صرف 26 واقعات ہوئے تھے۔

اسدالدین اویسی، فوٹو:پی ٹی آئی

جے این یو تشدد: اویسی نے ایف آئی آر پر اٹھائے سوال، کہا-یہ شرمناک ہے کہ متاثرہ کے خلاف معاملہ درج کیا گیا ہے

اویسی نے جے این یو اسٹوڈنٹ یونین صدر آئشی گھوش کا نام لئے بنا کہا کہ یہ شرمناک ہے کہ ایک معاملہ اس لڑکی کے خلاف درج کیا گیاہے جس کےسر پر 18 -19 ٹانکے آئے ہیں۔

فوٹو: ویکی پیڈیا

بہار: 17 شیلٹر ہوم کی جانچ‌ کے بعد 25 کلکٹر سمیت 71 افسروں پر کارروائی کی سفارش

بہار کے مظفر پور بالیکا گریہہ میں جنسی استحصال کا معاملہ سامنے آنے کے بعد ریاست کے 17 شیلٹر ہوم میں بچوں کے جنسی استحصال اور ظلم و ستم کے معاملے سامنے آئے تھے۔ سپریم کورٹ نے سی بی آئی کو ان کی جانچ‌کا حکم دیا تھا۔

HBB 6 Jan 2020.00_30_05_18.Still002

جے این یو طلبا اور اساتذہ پر حملہ کرنے والے نقاب پوش کون ہیں؟

ویڈیو: گزشتہ 5 جنوری کی رات کچھ نقاب پوش جے این یو میں گھس آئے اور مختلف ہاسٹل میں توڑ پھوڑ کی اور طلبا کو بے رحمی سے پیٹا۔ اس تشدد میں جے این یو اسٹوڈنٹس یونین صدر آئشی گھوش سمیت کئی طلبا زخمی ہوئے ہیں۔اس مدعے پر اسٹوڈنٹ لیڈر شریا گھوش، پرینکا بھارتی، ڈی یو کے ٹیچر جتیندر مینا اور دی وائر کے صحافی اویچل دوبے سے بات کر رہی ہیں دی وائر کی سینئر ایڈیٹر عارفہ خانم شیروانی۔

(فائل فوٹو : پی ٹی آئی)

آٹھ جنوری کو ٹریڈ یونین کی ملک گیر ہڑتال، 25 کروڑ لوگوں کے شامل ہو نے کا دعویٰ

فیس میں اضافہ اور ایجوکیشن کے کمرشیلائزیشن کی مخالفت کرنےکے لئے طالبعلموں کی 60 تنظیموں اور کچھ یونیورسٹی کے اہلکاروں نے بھی دس مرکزی ٹریڈ یونین کے ذریعے منعقد اس ہڑتال میں شامل ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔ ٹریڈ یونین نےجے این یو میں تشدد اور دیگر یونیورسٹی میں اسی طرح کے واقعات کی تنقید کی ہے۔

JNU-Violence-Student-room-PTI-1024x736

جے این یو تشدد: 5 جنوری کو کیا ہوا تھا؟

ویڈیو: گزشتہ 5 جنوری کی رات کچھ نقاب پوش جے این یو میں گھس آئے اور مختلف ہاسٹل میں توڑ پھوڑ کی اور طلبا کو بے رحمی سے پیٹا۔ اس تشدد میں جے این یو اسٹوڈنٹس یونین صدر آئشی گھوش سمیت کل 30 سے زیادہ لوگ زخمی ہوئے ہیں۔پورے معاملے پر شیکھر تیواری ،دھیرج مشرا، وشال جیسوال اور اویچل دوبے کی رپورٹ۔

(فوٹو: پی ٹی آئی)

جے این یو پر حملے کی کہانی، چشم دیدوں کی زبانی

اتوار کو دیر شام جے این یو میں باہر سے بڑی تعداد میں آئے نقاب پوش لوگوں نے جے این یو کے طالبعلموں اور اساتذہ پر حملہ کیا۔ اس دوران جےاین یو طلبہ یونین صدر آئشی گھوش سمیت کئی طالبعلموں اور اساتذہ کو سنگین چوٹیں آئیں۔

ابھیجیت بنرجی (فوٹو : رائٹرس)

جے این یو میں تشدد کا سہارا لینا خوفناک ہے: ابھیجیت بنرجی

جے این یو میں تشدد پر مرکزی وزیر نرملا سیتا رمن کے تبصرے سے عدم اتفاق کا اظہار کرتے ہوئے نوبل ایوارڈ یافتہ ابھیجیت بنرجی نے کہا کہ جے این یو کے لیے سب سے اہم بات یہ تھی کہ وہ اختلاف رائے کے لیے ایک محفوظ جگہ تھی۔ جے این یو کو دشمن مانے جانے کی لمبی روایت ہے۔

0601 Media Bol Master.00_47_45_06.Still001

میڈیا بول: جے این یو پر نقاب پوش حملے کا سچ اور اقتدار

ویڈیو: گزشتہ اتوار کی رات کچھ نقاب پوش جے این یو میں گھس آئے اور مختلف ہاسٹل میں توڑ پھوڑ کی اور طلبا کو بے رحمی سے پیٹا۔ اس تشدد میں جے این یو اسٹوڈنٹس یونین صدر آئشی گھوش سمیت متعدد لوگ زخمی ہوئے ہیں۔ اس مدعے پر جے این یو ایس یو کی سابق صدر گیتا کماری، سینئر صحافی شیتل سنگھ اور جے این یو کے سابق پروفیسر پروشتم اگروال اور سوراج انڈیا کے قومی صدر یوگیندر یادو کے ساتھ بات چیت کر رہے ہیں سینئر صحافی ارملیش۔

پروفیسر سی پی چندر شیکھر

جے این یو تشدد کو لے کر معروف اکانومسٹ سی پی چندر شیکھر نے مرکز کی کمیٹی سے استعفیٰ دیا

ملک کے اقتصادی اعداد و شمارکو لے کر مودی حکومت کی تنقید کے بعد گزشتہ مہینے مرکزی وزارت شماریات نے سابق ماہر شماریات پرنب سین کی صدارت میں یہ پینل بنایا تھا، جس کا کام ملک کے مختلف شعبوں کے اقتصادی اعداد و شمار کا تجزیہ کرنا اور اس کابھروسہ بحال کرنا ہے۔

فوٹو: پی ٹی آئی

جے این یو تشدد: اسٹوڈنٹ یونین صدر آئشی گھوش سمیت 19 لوگوں پر معاملہ درج

جے این یوتشدد معاملے میں انتظامیہ کی شکایت پر اسٹوڈنٹ یونین کی صدرآئشی گھوش اور دوسروں کے خلاف ایف آئی آر درج کی گئی ہے۔ ان پر مبینہ طور پر چار جنوری کو جے این یو کے سرور روم میں توڑ پھوڑ کرنے اور گارڈوں پر حملہ کرنے کا الزام ہے۔

جے این یو میں ہوئے تشدد کی مخالفت میں آکسفورڈیونیورسٹی کے طالبعلموں نے مظاہرہ کیا۔ (فوٹو بشکریہ: ٹوئٹر)

پونڈیچری سے آکسفورڈ تک کی یونیورسٹی میں جے این یو تشدد کے خلاف مظاہرہ

آکسفورڈ اور کولمبیا یونیورسٹی میں طالب علموں نے یکجہتی کا مظاہرہ کرتے ہوئے مارچ کیا اور کیمپس میں طالبعلموں کے تحفظ کا مطالبہ کیا۔ علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں طالب علموں نے جے این یو میں ہوئے تشدد کی مخالفت کی۔

Don`t copy text!